عمران خان آج اپیلٹ ٹربیونل اسلام آباد طلب

عمران خان آج اپیلٹ ٹربیونل اسلام آباد طلب

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ کے الیکشن اپیلٹ ٹربیونلزنے سابق وفاقی وزیر مسلم لیگ (ن) کے امیدوار خواجہ آصف ،روحیل اصغر،تحریک انصاف کی امیدوار فردوس عاشق اعوان کو انتخابات لڑنے کا اہل قرار دیتے ہوئے ان کے خلاف اپیلیں مسترد کردیں جبکہ بھکرسے آزاد امیدواروں سعید اکبر نوانی،رشید اکبر نوانی اور پی ٹی آئی کے راہنما سابق گورنر پنجاب چودھری محمد سرور کے بھائی محمد رمضان کو ٹوبہ ٹیک سنگھ سے انتخابات لڑنے کیلئے نااہل قرار دے دیا۔لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شہباز رضوی نے حلقہ این اے 72سیالکوٹ سے اپیل کنندہ زید لطیف کی اپیل مسترد کرتے ہوئے تحریک انصاف کی امیدوار فردوس عاشق اعوان کو انتخابات لڑنے کا اہل قرار دے دیا،ٹربیونل نے حلقہ این اے 73سیالکوٹ سے اپیل کنندہ سرمد حنیف کی اپیل مسترد کرتے ہوئے خواجہ آصف کو انتخابات میں حصہ لینے کا اہل قرار دے دیا،جسٹس طارق سلیم شیخ پر مشتمل الیکشن اپیلٹ ٹربیونل نے نوید علی نامی اپیل کنندہ کی اپیل مسترد کرتے ہوئے شیخ روحیل اصغر کو حلقہ این اے 128لاہورسے انتخابات میں حصہ لینے کا اہل قرار دے دیا،جسٹس فیصل زمان پر مشتمل الیکشن اپیلٹ ٹربیونل نے انعام اللہ خان نیازی کی اپیلیں منظور کرتے ہوئے حلقہ این اے 98اور پی پی90بھکرسے دو آزاد امیدواروں رشید اکبر نوانی اور سعید اکبر نوانی کو جعلی ڈگریوں کی بناء پر نااہل قرار دے دیا،الیکشن ٹربیونل نے اقلیتی امیدوار طارق مسیح گل کو مسیحی میرج قانون کی خلاف ورزی کرنے اور دو مقدمات میں اشتہاری ہونے کی بناء پراقلیت کی مخصوص نشست سے انتخابات لڑنے کے لئے نااہل قرار دے دیا،ٹربیونل نے پی پی 120ٹوبہ ٹیک سنگھ سے پی ٹی آئی کے امیدوارمحمد رمضان کو بھی انتخابات لڑنے کے لئے نااہل قرار دیتے ہوئے ریٹرننگ افسر کا فیصلہ کالعدم قراردے دیا۔

اہل قرار

اسلام آباد ( سٹاف رپورٹر) الیکشن ٹریبونلز نے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی،عائشہ گلالئی کو الیکشن لڑنے کی اجاز ت دیدی ۔سابق وزیراعظم ذاتی حیثیت میں ٹربیونل کے سامنے پیش ہوئے اور موقف اپنایا کہ آر او نے حقائق کے برعکس میرے کاغذات نامزدگی مسترد کئے۔عدالت نے این اے 53کے آر او کا فیصلہ کالعد م قرار دیتے ہوئے سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو الیکشن لڑنے کی اجازت دے دی۔واضح رہے کہ شاہد خاقان عباسی پر کاغذنامزدگی درست طریقے سے پر نہ کرنے کا اعتراض تھا۔اور اب این اے 53سے شاہد خاقان عباسی مسلم لیگ (ن) کے امیدوار ہوں گے۔این اے 53کے آراو کا فیصلہ مسترد کرتے ہوئے عائشہ گلالئی کو الیکشن لڑنے کی اجازت دیدی۔تفصیلات کے مطابق منگل کو این اے53سے عائشہ گلالئی کے کاغذات نامزدگی مسترد کرنے کے خلاف جسٹس محسن اختر کیانی نے کیس کی سماعت کی۔اس موقع پرعائشہ گلالئی کا کہنا تھا کہ آر او نے حقائق کے برعکس میرے کاغذات نامزدگی مسترد کئے۔عدالت نے این اے 53کے آر او کا فیصلہ کالعد م قرار دیتے ہوئے عائشہ گلالئی کو الیکشن کے لئے اہل قرار دیدیا۔سپریم کورٹ نے بورے والا سے سابق رکن اسمبلی نذیرجٹ کی تاحیات نااہلی کے خلاف نظر ثانی اپیل خارج کردی ،چیف جسٹس نے کہاکہ عدالت نے آرٹیکل باسٹھ ون ایف میں تاحیات نااہلی کی مدت کا تعین کردیا ہے ،نذیر جٹ جعلی ڈگری پرغیرصادق اورغیرآمین قرارپائے۔اپلیٹ ٹربیونل اسلام آباد جسٹس محسن اختر کیانی نے جسٹس اینڈ ڈیموکریٹک پارٹی کی اپیل پر تحریک انصاف کے چےئر مین عمران خان کو آج (بدھ کو ) ذاتی حیثیت میں طلب کر لیا ۔دوران سماعت فاضل جج نے ریمارکس دئیے شاہد خاقان عباسی نے شق این کو پر کیا لیکن آپ کی خالی ہے،عدالت نے حکم دیا عمران خان خود پیش ہو کر شق این مکمل کریں ۔جب سماعت شروع ہوئی تو عمران خان کے وکیل ڈاکٹر بابر اعوان نے دلائل دیتے ہوئے عدالت سے استدعا کی امریکی عدالت کے فیصلے میں عمران خان کا ذکر موجود نہیں ہے ۔دوران سماعت جسٹس اینڈ ڈیموکریٹک کے وکیل نے دلائل دیتے ہوئے عدالت کو بتایا عمران خان کی ایک بیٹی ہے جس پر درخواست گزار کے وکیل نے امریکی عدالت کا فیصلہ بھی پڑھ کر سنایا عبدالوہاب بلوچ ایڈووکیٹ کا مزید کہنا تھا کہ عمران خان کے خلاف امریکی عدالت سے یکطرفہ فیصلہ آیا بعد ازاں عدالت نے فریقین کے وکلاء کے دلائل مکمل ہونے کے بعد عمران خان کو پیش ہونے کا حکم دیتے ہوئے آج 27 جون کو طلب کر لیا ۔

نااہل قرار

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر ) ریٹرننگ افسران کی جانب سے قومی اور صوبائی اسمبلیوں کی نشستوں کیلئے کاغذات نامزدگی منظور یا مسترد کئے جانے کے خلاف دائر اپیلوں پر فیصلہ کرنے کا (آج) بدھ آخری روز ہے، امیدواروں کی نظرثانی شدہ فہرست (کل) جمعرات کو شائع کی جائے گی۔تفصیلات کے مطابق ریٹرننگ افسران کی جانب سے قومی اور صوبائی اسمبلیوں کی نشستوں کیلئے کاغذات نامزدگی منظور یا مسترد کئے جانے کے خلاف دائر اپیلوں پر فیصلہ کرنے کا (آج) بدھ آخری روز ہے، امیدواروں کی نظرثانی شدہ فہرست جمعرات کو شائع کی جائے گی،جبکہ امیدواراپنے کاغذات نامزدگی اس ماہ کی انتیس تاریخ تک واپس لے سکتے ہیں،الیکشن کمیشن امیدواروں کوانتخابی نشانات اس ماہ کی تیس تاریخ کو الاٹ کرے گا۔

مزید : صفحہ اول