انٹرا پارٹی انتخابات قانون کے بر خلاف،شہباز شریف کی پارٹی صدارت چیلنج

انٹرا پارٹی انتخابات قانون کے بر خلاف،شہباز شریف کی پارٹی صدارت چیلنج

اسلام آباد(آن لائن)مسلم لیگ (ن) اسلام آباد کے جنرل سیکرٹری نے شہبازشریف کی پارٹی صدارت کو چیلنج کرتے ہوئے الیکشن کمیشن آف پاکستان سے رجوع کرلیا ہے۔انٹراپارٹی الیکشن قانون کے مطابق نہیں ، یونین کونسل سے لیکر ضلعی،صوبائی اور قومی سطح پر ریکارڈ طلب کیا جائے۔نوازشریف کی نااہلی کے بعد خلاف ضابطہ اور آئین وقانون کے برخلاف شہبازشریف کو پارٹی کی مسند پر بٹھانا کسی صورت بھی جائز نہیں۔گزشتہ روز اسلام آباد مسلم لیگ کے جنرل سیکرٹری شجاع الرحمان نے الیکشن کمیشن آف پاکستان میں ایک درخواست دائر کی ،جس میں انہوں نے مؤقف اپنایا کہ وہ عرصہ 30سال سے پاکستان مسلم لیگ سے منسلک ہیں اور گزشتہ 16سالہ سے جماعت کی مرکزی مجلس عاملہ سمیت اعلیٰ فیصلہ سازی میں بھی اہم رکن ہیں۔ میری استدعا ہے کہ احسن اقبال کو ہدایات جاری کی جائیں کہ جماعت کے صدارتی الیکشن کا سارا ریکارڈ رکن سازی،پرائمری یونین،ضلعی وشہری،صوبائی وقومی سطح پہ پارٹی الیکشن کا سارا ریکارڈ پیش کیا جائے۔اس موقع پر درخواست گزار نے پاکستان مسلم لیگ کے احسن اقبال،قائم مقام سیکرٹری جنرل اور صدر شہبازشریف،پارٹی چیئرمین راجہ ظفرالحق اور سابق صدر میاں نوازشریف کو فریق بنایا ہے۔

مزید : کراچی صفحہ اول