کوہاٹ ،ایمپلائز یونین کی مطالبات منظور نہ ہونے کی صورت میں ہڑتال کی دھمکی

کوہاٹ ،ایمپلائز یونین کی مطالبات منظور نہ ہونے کی صورت میں ہڑتال کی دھمکی

کوہاٹ(بیورورپورٹ) ایمپلائز یونین ڈبلیو ایس ایس سی کے صدر حاجی محمد سہیل نے مطالبات منظور نہ ہونے پر یکم جولائی سے ہڑتال کا اعلان کر دیا گزشتہ دو سالوں سے ٹی ایم اے اور ڈبلیو ایس ایس سی کی انتظامیہ ورکروں کے ساتھ مذاق کرتی آ رہی ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے انقلاب کوھاٹ کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کیا حاجی محمد سہیل کا کہنا تھا کہ گزشتہ دو سالوں سے ہمارے کسی ورکر کو زخمی یا بیمار ہونے کی صورت میں میڈیکل نہیں دیا گیا جو کہ ظلم کی انتہا ہے اسی طرح اپ گریڈیشن کے بعد ملنے والے Arrier سے تمام ورکر محروم ہیں ٹی ایم اے والے ڈبلیو ایس ایس سی پر جبکہ ڈبلیو ایس ایس سی والے ٹی ایم اے پر ڈال کر وقت گزاری کر رہے ہیں دوسری جانب تمام ملازمین چاہے واٹر سپلائی میں ہوں یا سینی ٹیشن میں دن رات ایمانداری سے اپنے فرائض انجام دے رہے ہیں مگر اوپر بیٹھے افسران کو ورکروں کے مسائل سے کوئی دلچسپی نہیں اس کے علاوہ یونین کے صدر کا یہ بھی کہنا تھا کہ ہمارے سینکڑوں ورکروں کی سروس ٹیکس میں کوئی انٹری کرنے کو تیار نہیں اس مسئلے کو بھی کئی بار حل کرنے کی درخواستیں کر چکے ہیں مگر ہماری شرافت کا ناجائز فائدہ اٹھایا جا رہا ہے لہٰذا اگر 30 جون تک ہمارے تمام مطالبات تسلیم نہ کیے گئے تو یکم جولائی سے کوھاٹ شہر اور کے ڈی اے میں صفائی اور واٹر سپلائی کا کام روک دیا جائے گا اور مطالبات کی منظوری تک مکمل ہڑتال ہو گی جس کی ذمہ داری ٹی ایم اے اور ڈبلیو ایس ایس سی کے افسران پر عائد ہو گی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر