ٹکٹ نہ ملنے پر امیدوار کا حامیوں سمیت گیلانی ہاؤس کے باہر دھرنا

ٹکٹ نہ ملنے پر امیدوار کا حامیوں سمیت گیلانی ہاؤس کے باہر دھرنا

ملتان (نیوزرپورٹر)پاکستان پیپلزپارٹی کے وائس چیئرمین سید یوسف رضا گیلانی کی رہائشگاہ پر حلقہ پی پی 279کو ٹ ادو سے ٹکٹ امیدوار سیدفراز احسن بخاری کا حامیوں سمیت دھرنا ٹکٹ کی یقین دہانی کرانے اور انتخابی مہم کا آغاز کرنے کی (بقیہ نمبر55صفحہ12پر )

ہدایت دینے کے باوجود پارٹی نے ٹکٹ ایک جاگیر دار کودے دیا ہے جیالوں کی بڑی تعداد بینرز اٹھائے پچھلے کئی گھنٹوں سے گیلانی ہاؤس کے باہر سراپا احتجاج ۔متاثرہ فریق نے بتایا کہ پارٹی ٹکٹ کے انٹرویو کیلئے 7مئی بلاول ہاؤس ملتان بلایاگیا اور آٹھ رکنی کمیٹی جن میں سید یوسف رضا گیلانی سمیت مخدوم احمد محمود، نتاشہ دولتانہ، عبدالقادر شاہین‘ شوکت بسراء، شازیہ عابد اور عبدالقیوم جتوئی شامل تھے‘ انٹرویو کے بعد ہمیں انتخابی مہم کا آغاز کرنے اور ٹکٹ دینے کی یقین دہانی کرائی گئی لیکن اب اچانک پیپلزپارٹی کی قیادت نے پچھلی چار نسلوں سے نظریاتی سید خاندان کو نظرانداز کرکے ڈیڑھ سو مربع اراضی رکھنے والے جاگیردار کودے دی ہے اگر پارٹی کی پارلیمانی کمیٹی نے ٹکٹ کسی جاگیردار کودینا تھا تو پھر ہمیں انتخابی مہم چلانے کیلئے کیوں کہا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی نے امجد قریشی نامی امیدوار کو ٹکٹ دے کر نہ صرف پارٹی ساکھ اور شہرت کو نقصان پہنچایا ہے بلکہ پی پی 279پر پارٹی کی شکست کابھی سامان فراہم کردیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ امجد قریشی (ن)لیگ سے پیپلز پارٹی میں شامل ہوئے تھے اور الیکشن 2013ء میں بھی صرف 3800ووٹ لے کر ہارگئے تھے‘ حلقہ کے نظریاتی ووٹرز نہ پہلے اسے ووٹ دیا تھا اور نہ ہی اب دیں گے سید یوسف رضا گیلانی سے اپیل ہے کہ وہ ٹکٹ ضائع کرنے کی بجائے حقداروں کو ٹکٹ دیں۔ انہوں نے کہا کہ علی حیدر گیلانی مذاکرات کا کہہ کر غائب ہوگئے ہیں ہم صبح ایک بجے تک یہاں دھرنا دیں گے‘ اگر ہمارا مطالبہ پورا نہ کیا گیا تو پھر بلاول ہاؤس لاہور میں دھرنا دینے کیلئے روانہ ہوجائیں گے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر