حمزہ شہباز، خورشید شاہ اورمیر شکیل الرحمن کی رہائی کے حق میں قرارداد اسمبلی میں جمع

حمزہ شہباز، خورشید شاہ اورمیر شکیل الرحمن کی رہائی کے حق میں قرارداد اسمبلی ...

  

لاہور(نمائندہ خصوصی،لیڈی رپورٹر)حمزہ شہباز، خورشید شاہ اورمیر شکیل الرحمن کو رہا کرنے کے مطالبے کی قرارداد پنجاب اسمبلی میں جمع،قرارداد مسلم لیگ (ن) کی رکن سمیرا کومل کی جانب سے جمع کرائی گئی۔

ب اسمبلی کا یہ ایوان جنگ اور جیو گروپ کے ایڈیٹر انچیف میر شکیل الرحمن کو بے گناہ قید میں رکھنے کی شدید مذمت کرتا ہے۔میر شکیل الرحمن پیچھلے 106دنوں سے پابند سلاسل ہیں۔نام نہاد جمہوری حکومت نے آمریت کا لبادہ اوڑ رکھا ہے۔موجودہ حکومت جمہوریت اور آزادی اظہاررائے پر قدغن لگارہی ہے۔میر شکیل الرحمن کو 36سال پرانے اور بے بنیاد کیس میں گرفتار کیا گیا۔نیب عمران خان حکومت کا آلہ کار بن چکا ہے۔نیب کے جعلی اور ظالمانہ احتساب سے سینئرسیاستدان،بزنس مین،صحافی اور بیوروکریسی محفوظ نہیں رہی۔نیب حکومت کے مخالفین کو دباؤ میں لانے کیلئے جھوٹے اور بے بنیاد مقدمات بناتا ہے۔حکومتی مخالفین کو انکوائری کی سٹیج پر ہی گرفتار کرلیا جاتا ہے جبکہ وزیراعظم سمیت حکومتی وزراء کے درجنوں کے ریفرنس دائر کرنے تک پہنچ چکے ہیں۔لیکن نیب کی جانب سے وزیراعظم سمیت کسی حکومتی وزیر کو گرفتار نہیں کیا جارہا ہے۔نیب ملکی معیشت اور جمہوریت کیلئے خطرے کی علامت بن چکا ہے۔لہذا یہ ایوان نیب کی جانب سے سیاسی مخالفین پر جھوٹے مقدمات بنانے کی مذمت کرتا ہے۔یہ ایوان مطالبہ کرتا ہے کہ میر شکیل الرحمن،حمزہ شہباز اور سینئر سیاستدان خورشید شاہ کو فوری رہا کیا جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -