پنجاب حکومت، لاہور رنگ روڈ اتھارٹی ودیگر کو فریقین کو نوٹسز جاری

پنجاب حکومت، لاہور رنگ روڈ اتھارٹی ودیگر کو فریقین کو نوٹسز جاری

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے رنگ روڈ سدرن لوپ تھری کیلئے اراضی ایکوائر کرنے کے معامہ پرعبوری حکم امتناعی جاری کر تے ہوئے پنجاب حکومت، لاہور رنگ روڈ اتھارٹی سمیت دیگر کو فریقین کو نوٹس جاری کردئیے۔عدالت نے اراضی کے جگہ کے معائنے کے لئے کمیشن بھی مقرر کردیاعدالت کا تمام فریقین کو آئندہ سماعت پر رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا ہے، چیف جسٹس ہائیکورٹ محمد قاسم خان نے شہری محمد الیاس چودھری کی درخواست پر سماعت کی۔ درخواست گزار کی طرف سے بیرسٹر میاں بلال احمد اور بیرسٹر عادل فیاض نے موقف اختیار کیا کہ لاہور رنگ روڈ کے پہلے نقشے میں سدرن لوپ تھری بالکل سیدھی سڑک بنائی گئی تھی۔رنگ روڈ اتھارٹی نے چند مخصوص افراد کو نوازنے کیلئے سدرن لوپ تھری کا نقشہ تبدیل کر دیا، رنگ روڈ کا نقشہ تبدیلی سے قبل متعلقہ کونسل سے منظوری بھی حاصل نہیں کی گئی،رنگ روڈ کا نقشہ تبدیل کرنے سے نہ صرف درخواستگزار بلکہ دیگر فیکٹریوں کے مالکان بھی متاثر ہو رہے ہیں۔درخواست گزار کی 5 کنال سے زائد 2 مختلف جائیدادیں بھی اس ترمیمی نقشے سے متاثر ہوئی ہیں،قانونی جواز کے بغیر زمین ایکوائر کرنے کا نوٹیفیکیشن بھی غیر قانونی قرار دے کر کالعدم کیا جائے۔

رنگ روڈ اتھارٹی

مزید :

صفحہ آخر -