مسلمانوں نے ہر دور میں عقیدہ ختم نبوت کا تحفظ کیا،مولانا عزیزالرحمن

مسلمانوں نے ہر دور میں عقیدہ ختم نبوت کا تحفظ کیا،مولانا عزیزالرحمن

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے مولانا عزیزالرحمن ثانی،مبلغ ختم نبوت مولانا عبدالنعیم، مولانا علیم الدین شاکر، قاری جمیل الرحمن اختر، مولانا حافظ محمداشرف گجر، مولانا محبوب الحسن طاہر، مولانا عبدالعزیز، مولانا خالدمحمود، مولانا سعید وقار، قاری ظہورالحق نے خطبات جمعہ میں بیان کرتے ہوئے کہا ہے عقیدہ ختم نبوت اور ناموس رسالت کی حفاظت کے لیے امت مسلمہ نے ہر دور میں ہمیشہ اتحاد واتفاق کا عملی مظاہرہ کیا ہے عقیدہ ختم نبوت کے تحفظ کے لیے بارہ سو صحابہ کرام نے جام شہادت نوش کیا ہے۔

،جن میں سات سو صحابہ کرام قرآن حافظ تھے اورستربدری صحابہ بھی ان شہداء ختم نبوت میں شامل تھے۔انہوں نے کہا کہ اللہ تعالیٰ اپنے پسندیدہ اور منتخب لوگوں سے اپنے محبوب ﷺ کی ختم نبوت کے تحفظ کا کام لیتا ہے۔

نا موس رسالت کا قانون تمام انبیاء کرام کی عزت اور ناموس کی حفاظت کا دربان اور چوکیدار ہے،آئین کی دفعہ295-C تحفظ ناموس رسالت ایکٹ کیخلاف کوئی بات برداشت نہیں کریں گے۔علماء نے کہا کہ ناموس رسالت قانون کیخلاف یہودی و قادیانی لابی سازشوں میں مصروف عمل ہے،ماضی میں بھی ایسی ناپاک کوشش کی گئی لیکن ان طاغوتی قوتوں کا تمام مکاتب فکر کے علماء کرام نے ڈٹ کر مقابلہ کیا اور تحفظ ناموس رسالت ایکٹ کی حفاظت کی۔اسلامیان پاکستان ناموس رسالت ایکٹ کیخلاف کوئی بھی سازش ہر گز برداشت نہیں کرینگے۔ علماء کرام نے کہا کہ اسلام و ملک دشمن قوتوں اور انکے آلہ کاروں کو متنبہ کرتے ہیں کہ وہ آئین کی اسلامی دفعات اور تحفظ ناموس رسالت کے ایکٹ کیخلاف اپنی مہم جوئی بند کریں۔علماء نے سپیکر قومی اسمبلی جانب سے جناب نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے اسم گرامی کے ساتھ ”خاتم النبیین“ لکھنے،پڑھنے،بولنے اور تعلیمی نصاب میں شامل کرنے کے لیے عمل

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -