شہریوں کی مشکلات اور مسائل کا حل اولین ترجیحات ہیں، آئی جی پنجاب

شہریوں کی مشکلات اور مسائل کا حل اولین ترجیحات ہیں، آئی جی پنجاب

  

لاہور(کرائم رپورٹر)انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب شعیب دستگیر نے کہاہے کہ شہریوں کی مشکلات اور درپیش مسائل کا ازالہ پولیس کی اولین ترجیحات میں شامل ہے چنانچہ جو سرکل افسر 8787کمپلینٹ سنٹر کی جانب سے بھجوائی جانے والی شکایت پر مقررہ وقت میں شکایت کنندہ سے رابطہ نہیں کرے گا یا اسکی شکایات کے ازالے کیلئے بروقت اقدامات نہیں لے گا وہ خود کو سخت کاروائی کیلئے تیار رکھے۔ انہوں نے مزیدکہاکہ 8787کمپلینٹ سنٹر میں موصول ہونے والی ہر درخواست پر سائلین سے خوش اخلاقی سے پیش آتے ہوئے انہیں درپیش مسائل کے حل کیلئے بھرپور محنت اور خلوص نیت سے بروقت اقدامات کو یقینی بنایا جائے جبکہ پرائم منسٹر پورٹل سے موصول ہونے والی شکایات کے ازالے کیلئے بھی ترجیحی بنیادوں پر کاوشیں جاری رکھی جائیں۔انہوں نے مزید کہا کہ شہریوں کی سہولت کیلئے بذریعہ کال، ایس ایم ایس، ای میل اور ڈاک سے موصول ہونے والے ہر درخواست کا فالو اپ رکھاجائے تاکہ شہریوں کو انصاف کی فی الفور فراہمی سے سروس ڈلیوری کا عمل بہتر سے بہتر ہوسکے۔ انہوں نے مزیدکہاکہ آئی جی پی کمپلینٹ سنٹر 8787پر موصول ہونے والی شکایات جاری کردہ ایس او پیز کے مطابق حل کی جائیں اور شہریوں کی طرف سے موصول ہونے والی شکایت کو تب تک داخل دفتر نہ کیا جائے جب تک کہ شہری اس پر ہونے والی کاروائی سے مطمئن نہ ہو جائے۔انہوں نے اے آئی جی شکایات کو ہدایت دی کہ 8787پر موصول ہونے والی کالز کو بطور خاص مانیٹر کرتے ہوئے اس بات کا خیال رکھیں کہ شہریوں کی جانب سے فراہم کی جانے والی مکمل معلومات متعلقہ سرکل افسر کو فراہم کی جائیں۔

انہوں نے مزیدکہاکہ پولیس کے متعلق موصول ہونے والی شکایات ابتدائی انکوائری کے بعد اگر باقاعدہ انکوائری کی ضرورت پیش آئے تو اسے کروایا جائے اور باقاعدہ انکوائری کے نتیجے میں الزامات ثابت ہونے یا نہ ہونے دونوں صورتوں میں اسے کمپلینٹ سنٹر ریکارڈ کا حصہ بنایا جائے اور الزامات درست ثابت ہونے پر محکمانہ کاروائی کیلئے سفارش بھی کی جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج سنٹرل پولیس آفس میں 8787 کمپلینٹ سنٹر کی فرنٹ ڈیسک (CMS)کے ساتھ انٹی گریشن سے متعلقہ اجلاس کی صدارت کے دوران کیا۔ دوران اجلاس آئی جی پنجاب کو صوبہ بھر سے موصول ہونے والی عوامی شکایات اور انکے حل کیلئے ہونے والے اقدامات بارے آگاہ کیا گیا۔

مزید :

علاقائی -