ٹی ٹونٹی،پاکستان نے ویسٹ انڈیز کو ہرا دیا،شاداب خان مین آف دی میچ

ٹی ٹونٹی،پاکستان نے ویسٹ انڈیز کو ہرا دیا،شاداب خان مین آف دی میچ

بارباڈوس(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان نے 4 ایک روزہ میچز پر مشتمل ٹی ٹوئنٹی سیریز کے پہلے میچ میں میزبان ویسٹ انڈیز کو 6 وکٹوں سے شکست دے دی۔کینسگٹن اول گراؤنڈ میں قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے ٹاس جیت کر پہلے ویسٹ انڈیز کو بیٹنگ کی دعوت دی تو میزبان ٹیم نے مقررہ 20 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 111 رنز بنائے۔ ہدف کے تعاقب میں احمد شہزاد اور کامران اکمل کریز پر آئے تو پراعتماد انداز میں کھیلتے ہوئے دونوں بلے بازوں نے ٹیم کا اسکور 25 تک پہنچایا تو شہزاد 13 رنز بنانے کے بعد ہولڈر کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوگئے جس کے بعد کامران اکمل بھی ایک چھکے اور 3 چوکوں کی مدد سے 22 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے جب کہ محمد حفیظ 5 اور بابراعظم 29 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔پانچویں وکٹ پر شعیب ملک اور کپتان سرفراز احمد نے 20 رنز کی شراکت قائم کی اور 112 رنز کا ہدف 17.1 اوور میں حاصل کیا، شعیب ملک 38 اور سرفراز احمد 4 رنز کے ساتھ ناٹ آؤٹ رہے۔ میزبان ویسٹ انڈیز کی جانب سے جیسن ہولڈر نے 2، سیموئل بدری اور کارلوس بریتھ ویٹ نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔ میچ میں بہترین کارکردگی پیش کرنے پر شاداب خان کو میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔اس سے قبل ایون لیوس اورچیڈوک والٹن نے ویسٹ انڈیز کی جانب سے اننگز کا آغاز کیا اور 13 کے مجموعی اسکور پر لیوس 10 رنز بنا کر رن آؤٹ ہوئے جس کے بعد سیمیولز 7 ، والٹن 18، کیون پولارڈ 14، رومین پاویل 5، لینڈل سیمنز اور سنیل نارائن ایک ایک رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔کپتان کارلوس بریتھ ویٹ نے ذمہ دارانہ انداز میں بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے 27 گیندوں پر 2 چھکوں اور 2 چوکوں کی مدد سے 34 رنز کی اننگز کھیلی۔ گرین شرٹس کی جانب سے شاداب خان نے 3، عماد وسیم، سہیل تنویر، وہاب ریاض اور حسن علی نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔ قومی ٹیم میں کامران اکمل نے 3 سال بعد واپسی کی ہے جب کہ شاداب خان نے انٹرنیشنل کرکٹ میں ڈیبیو کیا۔ لیگ سپنر شاداب خان پاکستان بمقابلہ ویسٹ انڈیز کے پہلے ٹی ٹونٹی میچ کے مین آف دی میچ قرار پائے، 4اوورز میں صرف7رنز دے کر 3وکٹیں حاصل کیں۔ مین آف دی میچ کا ٹائیٹل جیتنے پر میں سب سے پہلے اللہ کا اور اپنے والدین کا شکر ادا کرتا ہوں،میرے ماں باپ کی دعا میرے ساتھ تھی۔انشاء اللہ آگے میچز میں بھی اچھی کارکردگی دکھاؤں گا۔ان کا کہنا تھا کہ بولنگ کے لئے کنڈیشنز اچھی تھیں ،پی ایس ایل میں کھیلنے کے باعث اس میچ میں زیادہ مشکلات کا سامنا نہیں کرنا پڑا۔

میچ

مزید : صفحہ اول