لام چھن یونو ہانگ کانگ کی پہلی خاتون چیف ایگزیکٹو منتخب

لام چھن یونو ہانگ کانگ کی پہلی خاتون چیف ایگزیکٹو منتخب

بیجنگ(آ ئی این پی ) لام چھن یونو بھاری کثریت کیساتھ ہانگ کانگ کی پانچویں چیف ایگزیکٹو منتخب ہو گئیں ،لام نے 1133 میں سے 777 ووٹ حاصل کیے ،چینی مرکزی حکومت کی لام چھن یو نو کو ہانگ کانگ کی نئی چیف ایگزیکٹو منتخب ہونے پر مبارکباد، لام چھن یو نو نے منتخب ہوتے ہی تعلیم کے بجٹ میں 644 ارب امریکی ڈالر اضافے کا اعلان کر دیا ۔ چائنہ ریڈیو انٹرنیشنل کے مطابق چین کے خصوصی انتظامی علاقے ہانگ کانگ کے چیف ایگزیکٹو کیلئے انتخاب اتوار کو منعقد ہوا جس میں لام چھن یو نو ہانگ کانگ کی پانچویں چیف ایگزیکٹو منتخب ہو گئی ہیں انہوں نے 1133 میں سے 777 ووٹ حاصل کیے جبکہ ین کے مد مقابل تاسانگ چھنوا نے 365اور وو کوک ہنگ نے 21 ووٹ حاصل کیے جبکہ چیف ایگزیکٹو کے عہدے کیلئے صرف 600 ووٹوں کی ضرورت ہوتی ہے وہ یکم جولائی سے باقاعدہ طور پر اپنا عہدہ سنبھالیں گی اور وہ اس عہدے پر پہلی خاتون ہونگی ۔انہوں نے ہانگ کانگ یونیورسٹی سے گریجویٹ کیا اور اپنی زندگی سیاست کیلئے صرف کی اور 1980میں سوشل ویلفیر کے چیف کا عہدہ سنبھالا ۔ چین کے ریاستی کونسل کے دفتر برائے امور ہانگ کانگ اور مکاؤ اور ہانگ میں چینی مرکزی حکومت کے رابطہ دفتر نے اپنے الگ الگ بیانات میں لام چھن یو نو کو ہانگ کانگ کی نئی چیف ایگزیکٹو منتخب ہونے پر مبارک باد دیتے ہوئے کہا ہے کہموجودہ انتخاب متعلقہ قوانین کی روشنی میں منصفانہ اور شفاف طریقے سے عمل میں لایا گیا ہے ۔ چینی حکومت کو امید ہے کہ لام چھن یو نو ہانگ کانگ کی عوام کو متحد کرتے ہوئے ایک ملک دو نظام کی پالیسی کے تحت ہانگ کانگ کی ترقی اور امن و استحکام کیلئے کوشش کریں گی ۔

لام چھن یو نو

مزید : علاقائی