جنازہ میں شرکت کیلئے وزیراعلیٰ خیبر پی کے پرویز خٹک کی شاہانہ آمد

جنازہ میں شرکت کیلئے وزیراعلیٰ خیبر پی کے پرویز خٹک کی شاہانہ آمد

ایبٹ آباد(اے این این) خیبر پختونخوا میں تبدیلی کے دعویدار اور وی آئی پی کلچر کے نام نہاد مخالف پرویز خٹک کا ایک اور کارنامہ سامنے آ گیا ،مشتاق غنی کی والدہ کے انتقال پر پرویز خٹک کی شاہانہ آمد،ہیلی کاپٹر اتارنے کیلئے پی سی بی کے انڈر13ٹرائل رکوا دئیے ،وزیر اعلیٰ کی آمد سے قبل صوبہ کے مختلف اضلاع سے آنیوالے بچوں کو گراؤنڈ سے نکال دیا گیاجس پر والدین نے شدید احتجاج کیاجبکہ معاملہ میڈیا پر آنے کے بعد پرویز خٹک نماز جنازہ سے پہلے ہی واپس لوٹ گئے۔تفصیلات کے مطابق اتوار کو ا ایبٹ آباد کرکٹ گراونڈ میں پی سی بی انڈر13کرکٹ ٹرائل جاری تھے کہ ضلعی انتظامیہ پولیس کی بھاری نفری کے ہمراہ پہنچ گئی جس نے کھیل رکوا کر بچوں کو گراونڈ سے یہ کہہ کر باہر نکال دیا کہ وزیر اطلاعات خیبر پختونخوا مشتاق غنی کی والدہ کے جنازے میں شرکت کیلئے وزیراعلیٰ پرویز خٹک آرہے ہیں اور انکے ہیلی کاپٹرز کی لینڈنگ کیلئے گراونڈ کی پچ کو مختص کیا گیا ہے ، پرویز خٹک کی شاہانہ انداز میں آمد ہوئی اور وہ ہیلی کاپٹر سے اتر کر گاڑیوں کے قافلے میں مشتاق غنی کے گھر گئے، معاملہ میڈیا پر آنے کے باعث وزیر اعلیٰ نماز جنازہ میں شرکت کئے بغیر ہی مشتاق غنی کیساتھ تعزیت کا اظہار کر کے واپس پشاور روانہ ہو گئے۔دوسری جانب بچوں کیساتھ آئے والدین کا کہنا تھا ضلعی انتظامیہ کو ہیلی پیڈ کسی دوسری جگہ پر بنانا چاہیے تھا۔ڈپٹی کمشنر ایبٹ آباد نے میڈیا کو بتایا بچوں کے ٹرائل کچھ وقت کیلئے روکے منسوخ نہیں کیا ،ہیلی کاپٹر اتارنے کیلئے پی سی بی سے اجازت لے گئی ،جبکہ پی سی بی نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے کہا یہ بورڈ کی پالیسی کیخلاف ہے،کوئی بھی گراؤنڈ عوامی اجتماعات یا وی آئی پی افراد کی سرگرمیوں کے استعمال نہیں کیا جاسکتا ہے۔ بچے چترال ،دیر ،مردان اور صوابی سمیت دور دراز شہروں سے آئے ہیں، ٹرائل کیلئے انہیں دوبارہ نہیں بلاسکتے۔

مزید : صفحہ آخر