سرکاری تعلیمی اداروں کے قریب پیف سکولوں کے قیام کا نوٹس لینے کا مطالبہ

سرکاری تعلیمی اداروں کے قریب پیف سکولوں کے قیام کا نوٹس لینے کا مطالبہ

  

ملتان ( سٹاف رپورٹر )گرینڈ ٹیچرز الائنس کے مرکزی رہنما و صوبائی سینئر نائب صدرپنجاب ٹیچرز یونین رانا الطاف حسین نے کہا ہے کہ جن علاقوں میں سرکاری سکولز کام کر رہے ہیں ‘ وہاں ایک کلومیٹر کی حدود میں پیف پارٹنر سکولز کی ضرورت ہی نہیں ہے ‘ حکومت پنجاب صورتحال کا نوٹس لے کرتحقیقات کرائے اور سرکاری سکولز کے نزدیک قائم پیف پارٹنر سکولز کا الحاق ختم اورملی بھگت کرنے والے افسروں و(بقیہ نمبر15صفحہ12پر )

اہلکاروں کے خلاف کارروائی کی جائے ۔ گورنمنٹ ایلمنٹری سکولز کڑی داؤد خان کے ہیڈ ماسٹر نے غیرقانونی پیف پارٹنر سکول کے خلاف اعلی ٰحکام کو درخواست دے دی ‘ ہیڈ ماسٹر غلام شبیر خان نے درخواست میں موقف کیا ہے کہ کڑی داؤد خان میں ایم سی بوائز ایلمنٹری سکول اور گرلز ہائی سکول قائم ہیں ‘اس کے باوجود رولز کے برعکس نصف کلومیٹر کے فاصلے پر ہی سلمان پبلک سکول کو پنجاب ایجوکیشن فاؤنڈیشن نے الحاق دے دیا ہے جو غیر قانونی او ر غیر ضروری ہے کیونکہ وہاں پہلے ہی سرکاری سکولز ہیں ‘ اس لئے اس سکول کا الحاق ختم اور ملی بھگت کرنے والے سرکاری اہلکارو ں کے خلاف کارروائی کی جائے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -