جو نتائج سابقہ عام انتخابات کے تھے وہی مردم شماری کے ہونگے‘ سرائیکی رہنما

جو نتائج سابقہ عام انتخابات کے تھے وہی مردم شماری کے ہونگے‘ سرائیکی رہنما

  

ملتان (سٹی رپورٹر)سرائیکی صوبہ سرائیکی جماعتیں بنوائیں گی ۔ ن لیگ اور پیپلز پارٹی نے قوم کو مایوسی کے سوا کچھ نہیں دیا ۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان سرائیکی پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری اکبر انصاری اور سرائیکی رہنماؤں ظہور دھریجہ ، ملک جاوید چنڑ ، شعیب بلوچ اور سلطان کلاچی نے مشترکہ پریس کانفرنس میں کیا ۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت اتحاد اور اتفاق کی زیادہ ضرورت ہے کہ اقتدار پرست جماعتوں نے باریاں مقرر کی ہوئی ہیں اور اپنے اپنے اقتدار کے لئے علاقے اور صوبے تقسیم کر لئے ہیں (بقیہ نمبر46صفحہ12پر )

۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ الیکشن کے جو رزلٹ تھے وہی رزلٹ مردم شماری کے بھی ہونگے کہ اپنے اپنے صوبوں میں ان جماعتوں کو فری ہینڈ ملا ہوا ہے ۔ سرائیکی رہنماؤں نے کہا کہ سرائیکی قوم کے مردم شماری کے معاملے میں تحفظات بڑھ چکے ہیں کہ اس وقت سب سے زیادہ کمزور پوزیشن سرائیکی کی ہے ۔ جن سرائیکی اضلاع میں مردم شماری ہو رہی ہے ، مردم شماری کا عملہ کچی پینسل سے مارکنگ کر رہا ہے اور احتجاج پر کوئی کان نہیں دھرا جا رہا ۔ سرائیکی رہنماؤں نے کہا کہ وسیب کے تحفظات دور نہ کئے گئے تو نتائج تسلیم نہیں کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ 7 اپریل کو بیرسٹر تاج لنگاہ کی برسی پر ہم سب لوگ شریک ہونگے اور اس موقع پر سرائیکی صوبے کے لئے نیا لائحہ عمل تیار ہوگا ۔ سرائیکی رہنماؤں نے کہا کہ آصف زرداری نے دورہ ملتان کے موقع پر سخت مایوس کیا ، ان کا یہ کہنا کہ ’’ پہلے پنجاب گھن ڈٖیو ، ول صوبہ ڈٖیسوں ‘‘ حالانکہ وہ آئے تھے تو ان کو کھل کر بات کرنی چاہئے تھی کہ وہ نجی محفلوں میں تو کہتے ہیں کہ یوسف رضا گیلانی کو سرائیکی صوبے کی سزا ملی اور دوسرا سرائیکی مخدوم شہاب وزارت عظمیٰ کے لئے نامزد کیا گیا تو اسے بھی اس وجہ سے قبول نہ کیا گیا کہ وہ سرائیکی تھا ۔ ہم کہتے ہیں کہ اگر ایسی بات ہے تو آصف زرداری کو اس کا کھل کر اظہار کرنا چاہئے تاکہ دنیا کو پتہ چلے کہ سرائیکی قوم اور سرائیکی وسیب کے ساتھ کتنا نسلی امتیاز برتا جا رہا ہے۔ سرائیکی رہنماؤں نے کہا کہ 18 اپریل کو لاہور میں ہونیوالی سرائیکی کانفرنس کو بھی ہم بھرپور طریقے سے کامیاب کریں گے اور ہمیں ایک بار پھر اس بات کا عہد کرتے ہیں کہ سرائیکی صوبے کا مسئلہ وسیب کے لوگوں کا مسئلہ ہے اور انہوں نے ہی حل کرنا ہے ۔ ہم خبردار کرتے ہیں کہ الیکشن آ رہے ہیں ، اقتدار پرست جماعتیں نئے لولی پاپ اور نئے دھوکے دینے کے لئے نئے نئے پلان اور لولی پاپ لے کر آئیں گے اور کچھ ایسے لوگ بھی آئیں گے جو سرائیکی کا لبادہ اوڑھ کر سرائیکی وسیب کے مفادات کو فروخت کرنے کی کوشش کریں گے ۔ وسیب کے لوگوں کو ان سب سے ہوشیار رہنا ہو گا ۔دریں اثناء سرائیکی رہنماؤں نے نشتر ہسپتال جا کر سرائیکی فوک سنگر نسیم سیمی کی عیادت کی اور ان کی صحت یابی کیلئے دعا کی۔

سرائیکی رہنما

مزید :

ملتان صفحہ آخر -