ملک میں تعلیمی انقلاب برپا کرنا ترقی کی ضامن ہے :مفتی عبید اللہ

ملک میں تعلیمی انقلاب برپا کرنا ترقی کی ضامن ہے :مفتی عبید اللہ

ہنگو(بیورورپورٹ) ملک میں تعلیمی انقلاب برپا کرنا ترقی کی ضامن ہے۔نئے نسل کو جدید علوم سے اراستہ کرنے اور تعلیم یافتہ معاشرے کی تشکیل نو کے لئے اساتذہ کرام اور والدین کا سنجیدہ کردار نہایت اہمیت کا حامل ہے۔سرکاری تعلیمی اداروں کے ساتھ ساتھ نجی تعلیمی ادارے بھی کوالٹی ایجوکیشن فراہم کر رہی ہیں۔ضلعی حکومت ہنگونقل کے رجحان کے تدارک اور تعلیم کے فروغ کے لئے انقلابی اقدامات اٹھا رہی ہیں۔ان خیالات کا اظہار مہمان خصوصی ضلع ناظم مفتی عبید اللہ،ڈپٹی کمشنر ہنگو احسان اللہ،ایم ڈی سی ایم ایس سرور شاہ،پرنسپل گوہر کاکاخیل،حاجی نیاز بت خان و دیگر معززین علاقہ نے کنسپٹ ماڈل سکول درویزی پلوسہ ہنگو میں یوم والدین تقسیم انعامات تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔مقررین نے کہا کہ نظا م تعلیم کو اسلامی نظام تعلیم کے سانچے میں ڈالنے سے سے معاشرتی برائیوں کا سدباب ممکن ہے اور کسی بھی قوم و ملک کی ترقی کا انحصار بہترین نظام تعلیم کی فراہمی میں مضمر ہے۔ا نہوں نے کہا کہ نئے کو تعلیم کی روشنی سے ہمکنار کرنے میں اساتذہ کرام اور والدین کا کلیدی ہی تعلیم پسماندگی سے نجات دلاسکتی ہیں۔اس موقع پر ڈپٹی کمشنر احسان اللہ نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ شفاف تعلیمی ماحول کی فراہمی کے لئے امتحانی مراحل میں نقل کی رجحان کی تدارک کے لئے ضلعی حکومت کی اقدامات قابل ستائش ہیں۔انہوں نے کہا کہ ضلعی حکومت ہنگو نے پورے صوبے میں نقل کے رجحان کے سدباب کے لئے وہ اقدامات اٹھائیں ہے جو کہ صوبے کے دوسرے اضلاع میں نہیں اٹھائے گئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ بچے آنے والے مستقبل کے معماران قوم بنیں گے اس لئے طلباء و طالبات کو چاہیئے کہ وہ اپنے والدین کے ساتھ ساتھ اساتزہ کرام کا بھی احترام کریں۔انہوں نے کہا کہ اساتزہ کرام غیر نصابی سرگرمیوں کے بجائے اپنی تمام تر توانائیاں بچوں کی تعلیمی آگاہی اور تربیت پر صرف کریں کیونکہ اساتذہ کرام کا کام اور مقصد بچوں کی ہمہ گیر نشو نما کرنا ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر