پارلیمانی سیکرٹریز کی بھرمار، ہائی کورٹ نے پنجاب حکومت کو تفصیلی جواب کے لئے 19مئی تک مہلت دے دی

پارلیمانی سیکرٹریز کی بھرمار، ہائی کورٹ نے پنجاب حکومت کو تفصیلی جواب کے لئے ...
پارلیمانی سیکرٹریز کی بھرمار، ہائی کورٹ نے پنجاب حکومت کو تفصیلی جواب کے لئے 19مئی تک مہلت دے دی

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی ) لاہور ہائیکورٹ نے پنجاب میں پارلیمانی سیکرٹریز کی تعیناتیوں کے خلاف درخواست پر پنجاب حکومت کو جواب داخل کرانے کے لئے19 مئی تک مہلت دے دی ۔

نیب کا ادارہ اور قانون کرپشن کو فروغ دے رہے ہیں:رضاربانی

جسٹس عائشہ اے ملک نے خدائی خدمتگار سید محمود نقوی کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ حکومت نے پنجاب میں لاتعداد پارلیمانی سیکرٹریز تعینات کر رکھے ہیں، پارلیمانی سیکرٹریز وزراءکے اختیارات استعمال کر رہے ہیں، آئین کے تحت حکومت کو لاتعداد پارلیمانی سیکرٹریز کی تعیناتی کا اختیار نہیں ہے ،پنجاب میں پارلیمانی سیکرٹریز کی تعیناتیاں غیرقانونی قرار دیتے ہوئے کالعدم کی جائیں، پنجاب حکومت کی طرف سے اسسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل سمعیہ خالد پیش ہوئیں اور موقف اختیار کیا کہ حکومت اس معاملے تفصیلی جواب داخل کرانا چاہتی ہے ،مہلت دی جائے جس پر عدالت نے مزید سماعت 19مئی تک ملتوی کر دی ۔

مزید :

لاہور -