حکومت ایک سال اور گذار لے تو بڑی بات ہے ،عمران خان کا سب سے بڑادشمن عمران خان ہی ہے:شاہد خاقان عباسی

حکومت ایک سال اور گذار لے تو بڑی بات ہے ،عمران خان کا سب سے بڑادشمن عمران خان ...
حکومت ایک سال اور گذار لے تو بڑی بات ہے ،عمران خان کا سب سے بڑادشمن عمران خان ہی ہے:شاہد خاقان عباسی

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان مسلم لیگ ن کے سینئر رہنما اور سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ حکومت نے معیشت کو تباہ کردیا ہے، حکومت پانچ سال کے لیے آئی ہے لیکن ایک سال اوربھی گزار لے توبڑی بات ہے، عوام زیادہ دیر تک اسے برداشت نہیں کرپائیں گے،نواز شریف کے ملک سے بھاگنے کا کوئی خطرہ یا خدشہ موجود نہیں ہے،عمران خان کا سب سے بڑادشمن عمران خان ہی ہے،اگر منی ٹریل کا پوچھ لیں تو عمران خان کی کابینہ کے ستر فیصد وزیرپکڑے جائیں گے۔

نجی ٹی وی چینل ’’ہم نیوز ‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیراعظم شاہدخاقان عباسی کا کہنا ہے کہ تحریک انصاف نے معیشت کا اتنا برا حال کیا ہے جتنا ماضی میں کبھی نہیں ہوا ہے، عوام زیادہ دیر تک اسے برداشت نہیں کرپائیں گے،حکومت حالات وہاں بھی رکھنے میں ناکام رہی جہاں ہم چھوڑ گئے،وزیراعظم اور وزرا کا موقف الگ الگ ہے، مجھے خدشہ ہے یہ آپس میں ملتے نہیں ہیں۔سابق وزیراعظم نے کہا کہ ہم جس طرف جارہے ہیں وہاں زیادہ امید نظرنہیں آتی، جس ملک میں سیاسی نظام تباہ ہوجائے وہ ملک تباہ ہوجاتے ہیں، اچھے ہیں یا برے سیاستدانوں کا فیصلہ عوام نے کرنا ہے۔شاہدخاقان عباسی کا کہنا تھا کہ نوازشریف نے اس دور میں سب سے اچھا ڈیلیورکیا ہے، ہم نے ملک کے مسائل حل کیے، اس حکومت کو صرف کرنٹ اکاونٹ خسارہ ورثے میں ملا،نوازشریف کے یہاں سے بھاگنے کا کوئی خدشہ یا خطرہ نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ قانون کے سامنے حاضرہوں ہرطرح کا جواب دینے کو تیارہوں، ہمیشہ اپنی وزرات کے ہرکام کی ذمہ دارقبول کی ہے، اگر مقصد بدنامی ہے تو کامیابی ہوتی ہے لیکن کرپشن کے خاتمے میں مدد نہیں مل رہی، یہ کالاقانون ہے اس نے ملک کی ترقی کو روک رکھا ہے۔سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ نیب کے کیسز آگے بڑھنے کا مطلب یہ ہے کہ ان معاملات میں کوئی الزام یا ثبوت نہیں ہیں، کرپشن ختم کرنے کا صرف ایک طریقہ ہے اور وہ ہے ٹیکس کے قانون کو درست کرنے میں، ٹیکس قانون سے کرپشن پکڑسکتی ہے۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کا سب سے بڑادشمن عمران خان ہی ہے، جھوٹ اور کم ظرفی سیاست میں نہیں چلتی، ہماری قیادت نے عمران خان کی ہمیشرہ سے متعلق بات کرنے سے منع کیا ہے۔شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ بحریہ ٹاون کے حوالے سے سپریم کورٹ کا فیصلہ افسوسناک ہے، بظاہر اس فیصلے کا کوئی جواز نہیں ہے کہ یہ کس قانون کے تحت ایسا کیا گیا ہے۔رہنما مسلم لیگ ن نے کہا کہ نوازشریف کی ضمانت کا فیصلہ انسانی بنیادوں پر ہے، حکومت اگر اجازت دے دیتی تو بات یہاں تک نہ جاتی۔ آج کا فیصلہ حکومت کے منہ پرطمانچہ ہے۔ان کا کہنا تھا کہ آج ملک کا بچہ بچہ کہتا ہے عمران خان کو اسٹبلشمنٹ لائی ہے، یہ بدقسمتی ہے کہ ہرسیاست جماعت کا آغاز ایک ہی طریقے سے ہوا، کچھ نے سبق سیکھ لیا ہے اور کچھ سیکھ رہے ہیں لیکن بنیادی بات یہ ہے کہ ملک آئین کے تحت نہیں چلے گا تو ترقی نہیں کرے گا۔سابق وزیراعظم نے دعوی کیا کہ اگر منی ٹریل کا پوچھ لیں تو عمران خان کی کابینہ کے ستر فیصد وزیرپکڑے جائیں گے، یہ نالائقوں کی حکومت ہے، حکومت نااہلی کے سبب ٹیکس اکٹھا کرنے میں ناکام ہورہی ہے۔

مزید : قومی