ایل این جی کیس ، نیب کی شاہد خاقان عباسی کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش

ایل این جی کیس ، نیب کی شاہد خاقان عباسی کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر ) نیب نے وزارت داخلہ کو خط لکھ کر شاہد خاقان عباسی کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کی سفارش کردی۔نیب کی جانب سے خط ڈی جی نیب راولپنڈی عرفان نعیم منگی کی منظوری سے لکھا گیا، جس میں کہا گیا ہے کہ شاہد خاقان عباسی نیب کی زیر تفتیش ایل این جی کیس میں نامزد ہیں لہٰذا ان کا نام ای سی ایل پر ڈالا جائے۔قبل ازیں ایل این جی کیس میں 15 روز حاضری سے استثنا کی درخواست مستردہونے پر شاہد خاقان عباسی ایل این جی کیس میں نیب راولپنڈی میں پیش ہوئے۔پیشی سے قبل میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ ضمانت کا قائل نہیں ہوں، بٹھا لیا تو بیٹھ جاؤں گا۔لیگی رہنما نے بتایا کہ نیب کا پرچہ لمبا ہے، تمام سوالات کے جوابات دینا ممکن نہیں تھا، جوابات کیلئے سرکاری ریکارڈ درکار ہے جس کیلئے سیکرٹری پیٹرولیم کو خط لکھا ہے۔بعد ازاں نیب میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو میں شاہد خاقان عباسی نے کہاکہ نیب حکام نے روزانہ بلایا تو روزانہ آجاؤں گا، نیب نے جو چیزیں مانگی تھیں وہ دے دی ہیں۔ شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ یہ بات سامنے آگئی کہ نواز شریف کی صحت کو شدید خطرہ ہے،نواز شریف کی بیماری کو طنز کا نشانہ بنانا کم ظرفی کا مظاہرہ ہے۔ سابق وزیراعظم نے کہا کہ نواز شریف کے بارے میں جو کہا گیا ہم نے وہ باتیں پہلے بھی درگزر کی ہیں ہم نے کبھی ملک کی سیاست کو گرانے کی سیاست نہیں کی۔ ہماری سیاست ہمیشہ ملک کے مفاد میں رہی ہے۔شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ نواز شریف نے کبھی نہیں کہا کہ وہ ملک سے باہر علاج کرانا چاہتے ہیں انشاء اﷲ عدالتوں سے نواز شریف کو ریلیف ملتا رہے گا۔ حکومت ملک، معیشت اور عوام کی فکر کرے۔

نیب/شاہد خاقان

ملتان(مانیٹرنگ ڈیسک) نیب نے سابق وزیر خارجہ حنا ربانی کھر کے خلاف تحقیقات شروع کردیں۔نیب حکام کے مطابق حنا ربانی کھر، ان کے والد غلام ربانی سمیت شوہر اور بچوں کے اثاثوں کی تفصیلات طلب کی گئی ہیں۔نیب حکام نے بتایا کہ نیب نے کمشنر، ڈپٹی کمشنر اور مالیاتی اداروں سے مطلوبہ ریکارڈ طلب کیا ہے۔ذرائع کے مطابق حنا ربانی پر اختیارات کے ناجائز استعمال، دھوکہ دہی اور آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے الزامات ہیں۔

حنا ربانی کھر /تحقیقات

مزید : صفحہ اول