صوابی میں دفعہ 144 کا نفاذ ہر قسم کے اجتماعات پر پابندی

صوابی میں دفعہ 144 کا نفاذ ہر قسم کے اجتماعات پر پابندی

  



صوابی(بیورورپورٹ) ڈی سی صوابی شاہد محمود نے ضلع بھر میں ہر قسم کی مذہبی، سماجی تقریبات اور اجتماعات پر دفعہ 144کے تحت ایک ماہ کے لئے پابندی لگا دی۔ اس سلسلے میں جاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ سرکاری ملازمین آن ڈیوٹی، محکمہ صحت کے ملازمین، مریض کے ساتھ دو افراد، دواخانہ سے دوائی لینے والے افراد، نماز جنازہ و تدفین میں شرکت والے افراد، ٹی ایم اے، واپڈا، سوئی گیس، ٹیلی کام کمپنیاں اور ان کے جزوی کسٹمر سروس سنٹر، بنک کا ضروری عملہ، اشیاء خوردونوش کی ترسیل اور اس کے کارخانے، میڈیکل سٹور، لیبارٹری، ہسپتال والے، بیج، کھاد اور زرعی ادویات والے دکانات، میڈیا نمائندہ گان، اخبارات فروخت کرنے والوں پر اس قانون / پابندی کا اطلاق نہیں ہوگا۔پرائیویٹ گاڑی پر صرف ایک شخص سفر کرے گا،مریض کے ساتھ صرف دو افراد پرائیویٹ گاڑی میں سفر کرسکتے ہیں،فی خاندان کم سے کم ایک اور زیادہ سے زیادہ دو افراد گھر کے لئے بازار سے ضروری سامان لے سکتے ہیں۔ معزوروں کے ساتھ ڈرائیور اور دو مزید افراد سفر کرسکتے ہیں.مندرجہ بالا افراد کو قومی شناختی کارڈ یا سروس کارڈ اپنے پاس رکھنا لازمی ہوگا،ایسے محکموں کے ملازمین جن کی چھٹی نہیں ہے ان کو امد و رفت کی اجازت ہے مگر دفتر میں ایک دوسرے سے فاصلے پر رہیں گے،بڑے سٹور میں بہ یک وقت صرف دو یا چار افراد خریداری کے لیے جائیں گے لیکن وہ ایک دوسرے سے فاصلے پر رہیں گے خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت تادیبی کاروائی کی جائے گی۔ضلعی انتظامیہ سے تعاون کریں اور گھر پر رہنے کو ترجیح دیں اپنے بچوں کو گھروں پر رکھیں اور اپنے اپ کو اس موذی مرض سے بچائیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر