گرمی شروع ہوتے ہی تحصیل ثمرباغ میں بجلی لوڈ شیڈنگ معمول 

گرمی شروع ہوتے ہی تحصیل ثمرباغ میں بجلی لوڈ شیڈنگ معمول 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


جندول(نمائندہ پاکستان) گرمی شروع ہوتے ہی تحصیل ثمرباغ میں بجلی لوڈ شیڈنگ معمول، گھریلوں صارفین اور تجارتی مراکز و سرکاری دفاتر میں کام متاثر ہونے لگا۔ خصوصی طور پر نادراء اور احساس پروگرام کے دفاتر کے سامنے کام میں تاخیر کی وجہ سے رش میں شدید اضافہ۔ واپڈاء حکام کے مطابق منڈا تا تیمرگرہ مین روڈ کی کشادگی کے بعد کھمبے ہٹانے کیلئے بجلی بند کرنی پڑتی ہے اس لئے لوڈ شیڈنگ ہوجاتا ہے۔تفصیلات کے مطابق گرمی کا مقسم شروع ہوتے ہی ایک مرتبہ پھر بجلی لوڈ شیڈنگ سر اٹھانے لگا ہے جس کی وجہ سے بجلی صارفین سخت مشکلات کا شکار اور ایک مرتبہ پھر حکام سے ناراض دکھائی دے رہے ہیں،خصوصی طور پر یونین کونسل درنگال کامبٹ اور مسکینی میں بجلی خراب ہوجائے تو کئی دن غائب رہتی ہے۔ بجلی نہ ہونے کی وجہ سے نادراء اور احساس پروگرام کے دفاتر میں روزانہ کا کام متاثر ہوتا ہے جس کی وجہ سے ان دفاتر پر عوام کی جم غفیر کھڑی رہتی ہے۔اس حوالہ سے واپڈاء حکام کا کہنا تھا کہ بالائی یونین کونسلز کی بجلی کا مسئلہ گذشتہ پندرہ سالوں سے چلا آرہا ہے جس کا واحد حل گریڈ سٹیشن کا قیام ہے جس پر تیزی سے کام جاری ہے۔ نشیبی علاقوں کی بجلی بندش کے حوالہ سے حکام کا کہنا تھا ہ منڈا تا تیمرگرہ روڈ کشادگی کی وجہ سے کھمبے ہٹائے جانے کیلئے پرمٹ لیا گیا ہے جس کی وجہ سے دن کے وقت صارفین متاثر ہوتے ہین تاہم جلد ہی ان مشکلات کو ختم کیا جائے گا۔ عوامی حلقوں کے مطابق بجلی درست کرنے کیلئے انہوں نے موجودہ حکومت کو ووٹ دیا ہے تاہم اگر انہوں نے بجلی مسائل حل نہ کئے تو آئندہ عوام سے ووٹ لینے کیلئے رابطہ نہ کریں۔