الیکشن کمیشن کا یوٹرن، تین الیکشن ٹربیونل تحلیل، چاروں ہائیکورٹوں سے نئے ٹربیونلز کیلئے نام مانگ لیے

الیکشن کمیشن کا یوٹرن، تین الیکشن ٹربیونل تحلیل، چاروں ہائیکورٹوں سے نئے ...
الیکشن کمیشن کا یوٹرن، تین الیکشن ٹربیونل تحلیل، چاروں ہائیکورٹوں سے نئے ٹربیونلز کیلئے نام مانگ لیے

  

کراچی ، اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)سندھ ہائیکورٹ کے چیف جسٹس کے تحفظات کے بعد الیکن کمیشن نے یوٹرن لیتے ہوئے سندھ کے الیکشن ٹربیونل تحلیل کردیااور چاروں ہائیکورٹ کے چیف جسٹس صاحبان سے نام دینے کی درخواست کردی ہے تاہم پہلے سے موجود دیگر گیارہ الیکشن ٹربیونلز کی حیثیت کے بارے میں خاموشی اختیار کی ۔ سندھ ہائیکورٹ کے رجسٹرار کی طرف سے الیکشن کمیشن کو لکھے گئے خط میں موقف اختیار کیاگیاتھاکہ سپریم کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں چیف جسٹس صاحبان سے مشاورت ضروری ہے ، الیکشن ٹربیونلز کے قیام سے قبل سندھ ہائیکورٹ کے چیف جسٹس مشیرعالم سے مشاورت نہیں کی گئی ۔سندھ ہائیکورٹ کے چیف جسٹس کے تحفظات کے بعد الیکشن کمیشن نے یوٹرن لیتے ہوئے سندھ کے تین ٹربیونلز کو تحلیل کردیاجبکہ پشاور، لاہور، بلوچستان اور سندھ ہائیکورٹ کے چیف جسٹس صاحبان سے الیکشن ٹربیونل کے لیے نام دینے کی درخواست کردی اور اس سلسلے میں چاروں ہائیکورٹس کو خط لکھ دیاگیاہے ۔ مقامی میڈیا کے مطابق الیکشن کمیشن نے پہلے سے موجود باقی 11الیکشن ٹربیونلز کی حیثیت کے بارے میں کچھ نہیں کہا۔ یاد رہے کہ ملک بھر سے عام انتخابات کے دوران ہونیوالی بدنظمی کی شکایات کے ازالے کے لیے چودہ ٹربیونل قائم کیے گئے تھے ۔

مزید :

الیکشن ۲۰۱۳ -