کچھ لوگوں کو مچھر نہیں کاٹتے کیونکہ۔۔۔

کچھ لوگوں کو مچھر نہیں کاٹتے کیونکہ۔۔۔
کچھ لوگوں کو مچھر نہیں کاٹتے کیونکہ۔۔۔

  

برمنگھم (بیورونیوز) جہاں ہم میں سے اکثر مچھروں اور خصوصاً ڈینگی مچھروں کے خوف میں مبتلا ہیں وہیں کچھ خوش قسمت لوگ ایسے بھی ہیں کہ مچھر جن کے قریب بھی نہیں پھٹکتے۔ تو جن لوگوں کا خون پینا مچھروں کو اتنا پسند ہے ان کا قصور کیا ہے؟ مائیکرو بیل اکالوجسٹ راب نائٹ کا کہنا ہے کہ ہماری جلد پر موجود بیکٹیریا اور دیگر جرثومے مختلف کیمیکل پیدا کرتے ہیں جن میں سے کچھ مچھروں کو بہت پسند ہوتے ہیں اور مختلف لوگوں کی جلد پر پائے جانے والے بیکٹیریا کافی حد تک مختلف قسم کے ہوتے ہیں۔ یہ ثابت کرنے کیلئے کہ مچھر کچھ لوگوں کی طرف مائل ہوتے ہیں اور کچھ کی طرف نہیں سائنسدانوں نے 48 لوگوں کو ایک تجربے کا حصہ بنایا۔ ان لوگوں کو دو دن تک شراب نوشی، مصالحہ جات اور نہانے سے منع کر دیا گیا اور پھر ان کے پاؤں کی نچلی سطح سے شیشے کی گولیوں کو رگڑ کر ان کی بو کو حاصل کیا گیا تاکہ یہ دیکھا جا سکے کہ مچھر اس کی طرف مائل ہوتے ہیں یا نہیں۔ جریدے پلاس ون(Plos One) میں چھپنے والی اس تحقیق میں سائنسدانوں نے بتایا کہ 9 لوگوں کی طرف مچھر بہت زیادہ مائل ہوئے جبکہ 7 کی طرف بالکل بھی نہیں۔ ماہرین نے انکشاف کیا کہ جن لوگوں کی طرف مچھر مائل ہوئے ان کی جلد پر کچھ مخصوص جرثومے دوسرے لوگوں کی نسبت کئی گنا زیادہ پائے گئے جو کہ مچھروں کی دلچسپی کا باعث ثابت ہوئے۔

مزید : تعلیم و صحت