نجم سیٹھی کیخلاف سپریم کورٹ میں توہین عدالت کی درخواست پر نوٹس

نجم سیٹھی کیخلاف سپریم کورٹ میں توہین عدالت کی درخواست پر نوٹس
نجم سیٹھی کیخلاف سپریم کورٹ میں توہین عدالت کی درخواست پر نوٹس

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) سپریم کورٹ سے ریلیف لینے کے لیے حقائق چھپانے پر چیئرمین پی سی بی نجم سیٹھی کے خلاف توہین عدالت کی درخواست پر فریقین کو نوٹس جاری کردیئے جبکہ عدالت نے پی سی بی کے ملازمین بحال کردیئے ۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے نجم سیٹھی کی بحالی کے فیصلے کیخلاف اپیل کی سماعت کے دوران ارباب الطاف کی جانب سے نجم سیٹھی کے خلاف توہین عدالت کی درخواست دائر کردی گئی جس میں درخواست گزار نے موقف اپنایاکہ نجم سیٹھی نے عدالت سے ریلیف لینے کے لیے حقائق چھپائے اور ڈویژنل بینچ میں وضع کردہ اصول بھی عدالت سے مخفی رکھے لہٰذا نجم سیٹھی کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کی جائے جس پر جسٹس انور ظہیر جمالی نے درخواست گزار کو ہدایت کی کہ آپ دستاویزات جمع کرادیں ، دیکھیں گے کہ وہ دستاویزات کس حدتک فیصلے سے متعلق ہیں ، عدالت کے سامنے اسلام آباد ہائیکورٹ کے حالیہ فیصلے کے خلاف اپیل ہے اور سماعت کچھ دیر کیلئے ملتوی کردی ۔ سماعت دوبارہ شروع ہونے پر فاضل عدالت نے درخواست منظور کرتے ہوئے فریقین کو توہین عدالت کے شوکاز نوٹس جاری کردیئے ۔عدالت نے پی سی بی کے ملازمین بحال کرنے کا حکم دیتے ہوئے واضح کیاکہ فیصلے کا اطلاق اُن ملازمین پر ہوگاجو اس کیس میں فریق ہیں اور سیٹھی کی تقرری سے متعلق کیس کی سماعت دو ہفتوں کیلئے ملتوی کردی ۔

مزید : اسلام آباد /اہم خبریں