نوازشریف کو بلوچستان اور سمجھوتہ ایکسپریس کی بات کرنی چاہئے تھی : چوہدری شجاعت حسین

نوازشریف کو بلوچستان اور سمجھوتہ ایکسپریس کی بات کرنی چاہئے تھی : چوہدری ...
نوازشریف کو بلوچستان اور سمجھوتہ ایکسپریس کی بات کرنی چاہئے تھی : چوہدری شجاعت حسین

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)مسلم لیگ (ق) کے رہنما چوہدری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ پاک بھارت وزرائے اعظم ملاقات میں بھارت نے ممبئی حملوں کے حوالے سے بات کی اس کے جواب میں نوازشریف کو بلوچستان اور سمجھوتہ ایکسپریس کی بات کرنی چاہئے تھی۔چوہدری شجاعت حسین نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے ہمیشہ بھارت کے ساتھ اچھے تعلقات قائم کرنے کی کوشش کی لیکن بھارت کی جانب سے کسی ایک واقعہ کو لے کر مذاکرات منسوخ کر دیئے جاتے ہیں ۔ہماری کوشش رہی ہے کہ پانی اور کشمیر سمیت بھارت کے ساتھ دیرینہ مسائل بات چیت سے حل کئے جائیں ، بھارت کی طرف سے پانی بند کرنے سے پاکستان میں کسانوں کا بیڑہ غرق ہو رہا ہے ۔چوہدری شجاعت نے کہا کہ نوازشریف تقریب حلف برداری میں شرکت کے لئے گئے تھے انہیں وہاں پریس کانفرنس نہیں کرنی چاہئے تھی ۔موجودہ حکومتوں میں پاک بھارت تعلقات کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ دونوں طرف نئے لوگ ہیں، اب دیکھنا ہے یہ کیسے چلتے ہیں ، اگر مودی کا موڈ کل کو بدل گیا تو پھر کیا ہوگا ؟

مزید : لاہور /اہم خبریں