خانہ بدوشوں کے بچوں کیلئے مختلف اضلاع میں سکول سسٹم قائم کریں گے،افتخار حسین

خانہ بدوشوں کے بچوں کیلئے مختلف اضلاع میں سکول سسٹم قائم کریں گے،افتخار حسین

 لاہور (وقائع نگار)ہیومن رائٹس ویلفےئر فورم کی ایگزیکٹو کونسل کا اجلاس گزشتہ روز مقامی ہوٹل میں ہوا جس کی صدارت افتخار حسین نے کی اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ خانہ بدوشوں کے بچوں اور معذور بچوں کو تعلیم کے زیور سے آراستہ کرنے کیلئے پنجاب کے مختلف اضلاع میں سکول سسٹم قائم کیا جائے گا جس میں درس و تدریس سے متعلق تما م اشیاء طلبہ و طالبات کو مفت فراہم کی جائیں گی ۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہو ئے ہیومن رائٹس ویلفےئر فورم کے صدرافتخار حسین نے بتا یا کہ پنجاب میں 3لاکھ کے قریب خانہ بدوش رہائش پذیر ہیں ، صوبائی دارالحکومت میں خانہ بدوشوں کی 26ہزار150جھگیاں ہیں جن میں1لاکھ20ہزار سے زائد خواتین بچے اور مرد غربت کی زندگی گزار رہے ہیں جبکہ ہزاروں کی تعداد میں بچوں نے ابھی تک سکول نہیں دیکھا اسی طرح پنجاب اور لاہور میں معذور افراد بالخصوص بچوں کی بڑی تعداد موجود ہے جو تعلیم کی روشنی سے محروم ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہیومن رائٹس ویلفےئر فورم کا مشن معذور اور خانہ بدوشوں کے بچوں کو مفت تعلیم وتربیت دے کر معاشرے کا باوقار شہری بنا نا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ملک کو اس وقت دہشت گردی اور انتہاء پسندی کا سامنا ہے اس صورت حال میں تعلیم ہی ایک ایسا ہتھیار ہے جس کے ذریعے سے انتہاء پسندی اور دہشت گردی کو شکست دی جاسکتی ہے      لہذا میں مخیر حضرات سے اپیل کرتاہوں کہ وہ پاکستان کو امن کا گہوارہ بنانے کیلئے مستحق بچوں کو مفت تعلیم کے زیور سے آراستہ کرنے کے مشن پر گامزن فلاہی اداروں کی بھرپور معاونت کریں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1