خاکسار تحریک امتحان کی گھڑی میں وکلاء کے ساتھ ہے،طاہرا قبال

خاکسار تحریک امتحان کی گھڑی میں وکلاء کے ساتھ ہے،طاہرا قبال

 لاہور(پ ر)خاکسار تحریک پاکستان کے مرکزی ترجمان طاہراقبال خان نے کہا کہ وکلاء اپنے ساتھیوں کے بہیمانہ قتل پرسراپااحتجاج ہیں پولیس فورس کو شہزاد وڑائچ قسم کے عناصر سے پاک کیا جائے۔خاکسار تحریک امتحان کی اس گھڑی میں پاکستان کی وکلاء برادری کے ساتھ ہیں دشمن ہمیں کمزورکرنے کیلئے آپس میں الجھارہا ہے ۔ پاکستان میں امن واستحکام کاانحصاربحیثیت قوم ہمارے مثبت رویوں پر ہے۔خداراباہمی اختلافات کونفرت اوردشمنی میں تبدیل نہ ہونے دیا جائے۔پاکستان میں نفاق اورنفرت کابیج بونا ملک دشمن قوتوں کی ضرورت اورفطرت ہے۔ اپنے ایک بیان میں طاہراقبال خان نے مزید کہا کہ عوام صبروتحمل کادامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں اورافواہوں پرہرگزکان نہ دھریں ۔ہمارا ملک اورمعاشرہ کشت وخون کامتحمل نہیں ہوسکتا ڈسکہ میں قیمتی جانوں کاضیاع اور جلاؤگھیراؤ قومی سانحہ ہے۔ سانحہ ڈسکہ پولیس میں دوررس اصلاحات کامتقاضی ہے ،اہلکاروں کونفسیاتی تربیت دی جائے۔انہوں نے کہا کہ سانحہ ڈسکہ سکیورٹی اداروں کی اعصابی کمزوری کی نشاندہی کررہا ہے ۔ احتجاجی مظاہروں کے دوران مٹھی بھر نقاب پوش افرادکی سرگرمیاں ایک بڑاسوالیہ نشان ہیں ملک بھر میں امن وامان برقراررکھنے کیلئے سماج دشمن عناصر کیخلاف سخت قانونی کاروائی کی اشدضرورت ہے ۔انہوں نے کہا کہ بیگناہ شہریوں کی زندگی اورقانون سے کھیلنے والے قابل رحم نہیں ہیں جنازوں پرسیاست چمکانے اوراشتعال انگیز گفتگوسے گریز کیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ شخصیت پرست معاشرے زیادہ دیرتک اپناوجودبرقرارنہیں رکھ سکتے۔ لوگ قیام امن کیلئے پاکستان میںآئین اور قانون کی حکمرانی کے منتظر ہیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1