سانحہ ماڈل ٹاؤن کے مجرموں کو سزا دی ہوتی تو ڈسکہ کا واقعہ نہ ہوتا،وٹو

سانحہ ماڈل ٹاؤن کے مجرموں کو سزا دی ہوتی تو ڈسکہ کا واقعہ نہ ہوتا،وٹو

لاہور( نمائندہ خصوصی) پیپلز پارٹی پنجاب کے صدر، میاں منظور احمد وٹو مقامی لیڈر اور کارکنوں کے ہمراہ وکلاء برادری کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے جب یہاں پریس کلب لاہور پہنچے تو وہاں پر پیپلز پارٹی کے کارکنوں اور پارٹی کی مقامی قیادت نے انکا استقبال کیا۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے انہوں نے پرزور مطالبہ کیا کہ ڈسکہ بار ایسوسی ایشن کے صدر، رانا خالد عباس اور ایک اور وکیل کے قتل کے ذمہ دار مجرموں کو فوری گرفتار کر کے انہیں قرار واقعی سزا دی جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اگر ماڈل ٹاؤن کے سانحہ کے مجرموں کو قانون کے مطابق سزا دی ہوتی تو شاید ڈسکہ کا واقعہ نہ ہوتا۔ ایسا معلوم ہوتا ہے کہ پولیس اور حکومت قانون سے بالاتر ہیں کیونکہ وہ روزانہ کی بنیاد پر قانون کی دھجیاں بغیر خوف و خطر اڑا رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی وکلاء برادری کی خدمات کو سلام پیش کرتی ہے ۔ اس موقع پر تنویر اشرف کائرہ، سہیل ملک، چوہدری اسلم گل، رانا گل ناصر، دیوان محی ا لدین،خرم جہانگیر خان وٹو، ایم پی اے، راجہ عامر، ایڈووکیٹ سپریم کورٹ، جہاں آراء وٹو، بابر بٹ، اعجاز چوہدری، نوید چوہدری، عمران اٹھوال، میاں ایوب، افنان بٹ، ڈاکٹر خیام حفیظ، الیاس خان ایڈووکیٹ، خاور کھٹانہ ایڈووکیٹ، میاں شاہد ایڈووکیٹ، لبنیٰ چوہدری ایڈووکیٹ بھی موجود تھے۔ وٹو

مزید : صفحہ آخر