سی اینڈ ڈبلیو پروفیشنل ٹیکس کی نادہند گی کے باجود تعمیراتی فرموں کی تجدید کرنے لگا

سی اینڈ ڈبلیو پروفیشنل ٹیکس کی نادہند گی کے باجود تعمیراتی فرموں کی تجدید ...

لاہور(شہباز اکمل جندران//انوسٹی گیشن سیل) سی اینڈڈبلیو پنجاب، پروفیشنل ٹیکس کی نادہندگی کے باوجود د تعمیراتی فرموں کی تجدید کرنے لگا۔حکومت پنجاب کی ہدایات کے تحت پروفیشنل ٹیکس ادا نہ کرنے والی تعمیراتی فرموں کی سالانہ تجدید نہیں ہوسکتی۔معلوم ہواہے کہ محکمہ مواصلات وتعمیرات پنجاب ، صوبائی حکومت کی ہدایات کو نظر انداز کرنے لگا ہے۔ محکمے کی انتظامیہ کی طرف سے ایسی ٹھیکیداری فرموں کی سالانہ تجدید کی جانے لگی ہے۔جو پروفیشنل ٹیکس کی نادہندہ ہیں۔ذرائع کے مطابق پروفیشنل ٹیکس 1977سے نافذ العمل ہے۔اور ٹھیکیداروں اور ان کی تعمیراتی فرموں پر مختلف شرح سے یہ ٹیکس عائد ہے۔جو فرم جتنی بڑی ہے۔ اسی قدر وہ پروفیشنل ٹیکس ادا کرتی ہے۔ کم از کم سالانہ ادائیگی پانچ ہزار روپے اور زیادہ سے زیادہ ادائیگی ایک لاکھ روپے ہے۔پنجاب حکومت کی طرف سے سی اینڈڈبلیو پنجاب کو ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ کسی بھی تعمیراتی فرم کی تجدید سے قبل اس امر کی تصدیق کی جائے کہ فرم پروفیشنل ٹیکس کی نادہندہ نہیں ہے۔ذرائع کے مطابق سی اینڈڈبلیومیں روڈز، بلڈنگز اور برجز کے لیے فرموں کی الگ الگ رجسٹریشن کی جاتی ہے۔اور ان لسٹمنٹ و رینیول کے لیے صوبائی سیکرٹری کی سربراہی میں کمیٹی کام کرتی ہے۔ لیکن یہ بھی بتایا گیا ہے کہ ایکسئین ، ایس ای اور چیف انجنئیر چہیتی فرموں کو بعض اوقات ضروری معاملات میں رعائت دینے لگتے ہیں۔جبکہ ایسی فرموں کے مالکان بھی محکمے کے ہیڈ آفس میں متعلقہ سیکشنوں میں فرم کی تجدید کے لیے ہر طرح کے ذرائع سے استعمال کرتے نظر آتے ہیں۔علم میں آیا ہے کہ ایسی فرموں کی طرف سے پروفیشنل ٹیکس کی عدم ادائیگی کے باعث حکومت خزانے کو ہرسال لاکھوں روپے کے خسارے کا سامنا بھی کرنا پڑتا ہے۔ اس سلسلے میں گفتگو کے لیے صوبائی سیکرٹری مواصلات سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے موقف دینے سے احتراز برتا۔ سی اینڈ ڈبلیو

مزید : صفحہ آخر