ٹائی لگانا عیسائیوں کا طریقہ ہے: اے کے ڈوگر ، اس سے ناک بھی پونچھ سکتے ہیں: جسٹس جواد

ٹائی لگانا عیسائیوں کا طریقہ ہے: اے کے ڈوگر ، اس سے ناک بھی پونچھ سکتے ہیں: ...
ٹائی لگانا عیسائیوں کا طریقہ ہے: اے کے ڈوگر ، اس سے ناک بھی پونچھ سکتے ہیں: جسٹس جواد

  

اسلام آباد (آن لائن) سپریم کورٹ 18 اور 21 ویں آئینی ترمیم کے خلاف دائر درخواستوں کی سماعت کے دوران اے کے ڈوگر اور ججز کے درمیان بعض دلچسپ مکالمے ہوئے ہیں۔ اے کے ڈوگر اس کی اس بات پر کہ ججز کے تقرر کا موجودہ طریقہ غیر اسلامی ہے تو اس پر جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ ججز کے لئے اشتہار چھپوانا، امتحانات لینا کون سا اسلامی ہے۔ اے کے ڈوگر نے کہا کہ ٹائی لگانا عیسائیوں کا طریقہ ہے تو اس پر جسٹس جواد نے کہا کہ ٹائی کے فائدے بھی ہیں ہمارے ایک استاد کہتے تھے کہ ٹائی سے آپ ناک بھی پونچھ سکتے ہیں۔ اسلام میں وکیل کا کہیں تذکرہ موجود نہیں۔ یہ مکالمے منگل کے روز چیف جسٹس ناصر الملک کی سربراہی میں 17 رکنی فل کورٹ کے روبرو ہوئے ہیں۔

مزید : اسلام آباد