عمران خان نے وہی کیا جس سے انہیں روکا گیا تھا

عمران خان نے وہی کیا جس سے انہیں روکا گیا تھا
عمران خان نے وہی کیا جس سے انہیں روکا گیا تھا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے عبوری سیٹ اپ کے تحت شاہ محمود قریشی کو اہم ذمہ داری دیئے جانے پر پارٹی آنے والے دنوں میں مشکلات کا شکار ہو سکتی ہے۔ ذرائع کے مطابق تحریک انصاف کے کئی سینئر رہنماءشاہ محمود قریشی کو کسی بھی طرح کی ذمہ داری دینے کے مخالف تھے جبکہ تحریک انصاف کے ایک خیرخواہ سینئر صحافی نے بھی ایک پروگرام میں یہ کہا تھا کہ اگر شاہ محمود قریشی کو پارٹی میں کوئی اہم ذمہ داری دی گئی تو وہ تحریک انصاف کیلئے انتہائی خطرناک ثابت ہو گی۔

واضح رہے کہ اس سے قبل پنجاب کی گورنرشپ اور مسلم لیگ ن سے مستعفی ہونے والے چوہدری سرور کو پنجاب میں پارٹی کا چیف آرگنائزر مقرر کیا گیا تھا اور اس فیصلے کو پارٹی رہنماﺅں اور دیگر لوگوں کی جانب سے بھی خوش آئند قرار دیتے ہوئے پارٹی کیلئے بہترین کاوش قرار دیا تھا تاہم تحریک انصاف کی جانب سے آج بنائے جانے والے عبوری سیٹ اپ میں شاہ محمود قریشی کو تحریک انصاف کا مرکزی عبوری چیف آرگنائزر مقرر کر دیا گیا ہے جس کے باعث کئی پارٹی رہنماﺅں کی جانب سے اس فیصلے پر احتجاج کا امکان بھی پیدا ہو گیا ہے۔

مزید : قومی /اہم خبریں