چیئرمین نیب کے خلاف چلنے والی خبر میں جہانگیر ترین کا کیا کردار ہے ؟ قومی اسمبلی میں تہلکہ خیز انکشاف

چیئرمین نیب کے خلاف چلنے والی خبر میں جہانگیر ترین کا کیا کردار ہے ؟ قومی ...
چیئرمین نیب کے خلاف چلنے والی خبر میں جہانگیر ترین کا کیا کردار ہے ؟ قومی اسمبلی میں تہلکہ خیز انکشاف

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )سابق وزیر خارجہ اور دفاع خواجہ آصف نے کہاہے کہ جس نیوز چینل نے چیئرمین نیب سے متعلق یہ خبر بریک کی اس چینل میں تحریک انصاف کے رہنما جہانگیر ترین حصے دار ہیں اور اس کے مالک طاہر خان پتا نہیں کہ وہ حصہ دار ہیں یا مالک ہیں ۔

قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے خواجہ آصف کا کہناتھا کہ کل ٹی وی چینل پر بیٹھ کر ایک صداقت علی صاحب نے کہا کہ وہ وزیراعظم کے معاون خصوصی رہے ہیں لیکن ہم نے دو دن سے انہیں میٹنگ میں بلانا چھوڑ دیاہے ۔ خواجہ آصف کا کہناتھا کہ اس سے ظاہر ہوتاہے کہ چیئرمین نیب کو کس لیے ٹارگٹ کیا جارہاہے ، جب کسی چینل نے یہ بوجھ اٹھانے سے انکار کیا تو ایک ایسا چینل نے خبر چلائی جس میں جہانگیر ترین کی حصے داری ہے ، طاہر خان جو کہ تقریبا 15 سالوں تک پاکستان تحریک انصاف کی تمام کمپینز ، تشہراور میڈیا ہینڈلنگ کے ایڈوائزر رہے ہیں جبکہ ٹی وی پر بھی یہ بات آ رہی ہے کہ وہ وزیراعظم کے بہت قریبی ہیں اور میٹنگز میں بیٹھتے ہیں ۔

خواجہ آصف کا کہناتھا کہ اس سے چیئرمین نیب کو بلیک میل کرنے کا ایک پراسیس شروع ہوا ، اس کے بعد چیئرمین نے بھی رد عمل دیا ، یہ سارے کا سارا بھانڈا بیچ چوراہے میں پھوٹ گیاہے ، اسے میڈیا نے بھی بہت اٹھایا لیکن حکومت نے جو رول اس میں ادا کیا وہ شرمناک تھا کہ اپنے لوگوں کو بچانے کیلئے جس نیب کے قانون میں ترمیم کرنے کیلئے تیار نہیں تھے اس کے چیئرمین کی عزت مٹی میں ملانے کی کوشش کی ۔

خواجہ آصف کا کہناتھا کہ یہ مسئلہ اتنا سنجیدہ ہو چکا ہے کہ میں اپنی پارٹی اور اپنی دوسری پارٹیوں کی طرف سے یہ تجویز دیتاہوں کہ اس پر خصوصی پارلیمانی کمیٹی تشکیل دی جائے جو کہ اس سارے مسئلے کی چھان بین کرے تاکہ دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جائے ۔

مزید : اہم خبریں /قومی