ہسپتالوں میں کورونا مریضوں کیساتھ دہشتگردوں والا سلوک کیا جا رہا ہے: سراج الحق

      ہسپتالوں میں کورونا مریضوں کیساتھ دہشتگردوں والا سلوک کیا جا رہا ہے: ...

  

پشاور(این این آئی) امیر جماعت اسلامی پاکستان سینٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ جب قوم اپنے پیاروں کے ساتھ عید کی خوشیاں منا رہی تھی تو کراچی سے چترال تک الخدمت فاؤنڈیشن اور جماعت اسلامی کے لاکھوں کارکنان عید کی خوشیوں میں شامل کرنے کے لیے غریبوں کے گھروں پر راشن پہنچانے کا اہتمام کر رہے تھے۔ عید کے تینوں دن سینکڑوں یتیموں، بیواوں میں عید گفٹس تقسیم کیے۔ہسپتالوں میں کورونا مریضوں کے ساتھ دہشت گردوں والا سلو ک کیا جارہا ہے لوگ بیمار ہوکر ہسپتال جانے سے ڈرتے ہیں اور ہسپتال جانے کے بجائے دریا میں کھود جانے کو ترجیح دیتے ہیں۔ملک میں میتوں کی تذلیل کی جارہی ہے۔حکومت اپنے او سی پیز پر نظر ثانی کریں۔ ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل سٹاف اپنی جانوں کو خطرے میں ڈال کر کورونا مریضوں کا علاج کررہے ہیں۔کئی ڈاکٹرز اور نرسز اب تک کورونا کے خلاف لڑتے ہوئے شہید ہوچکے ہیں۔ڈاکٹرز اور طبی عملے کی حفاظت حکومت کی ذمہ داری ہے مگر حکومت اپنی اس ذمہ داری کو پورا کرنے میں ناکام رہی ہے حکومت ڈ اکٹرز اور طبی عملہ کو پی پی ایز فراہم کرنے میں ناکام ہوچکا ہے۔کسی ہسپتال میں سینئر ڈاکٹرز نہیں ہے اور جو ڈاکٹر ڈیوٹی پر ہوتا ہے وہ صرف چوکیدار کی فرائض انجام دیتا ہے۔حکومت ڈاکٹر ز کے حفاظت کو یقینی بنائیں۔ تعلیمی عمل کی بحالی کے لیے اقدامات اٹھائیں جائیں۔ تعلیم کے ذریعے ہی قوم منظم ہوتی ہے اور ترقی کے راہ گامزن ہوتی ہے۔غیر معینہ مدت کے لیے تعلیمی اداروں کی بندش نئی نسل اور قوم کے ساتھ ناانصافی ہے۔ اوورسیز پاکستانیوں نے ہر مشکل وقت میں پاکستان کا ساتھ دیا ہے اور حکومتوں کی اپیل پر سب سے زیادہ پیسے بیرون ممالک میں مقیم پاکستانیوں نے بھیجے لیکن اس مشکل وقت میں جب زیادہ تر پاکستانی بے روزگار ہوگئے ہیں اور ان کے پاس کھانے پینے اور ہوائی جہاز کے ٹکٹ کے لیے پیسے نہیں ہے حکومت ان کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہی ہے جو قابل افسو رویہ ہے۔ وہ اوقاف ہال پشاور میں الخدمت فاونڈیشن خیبرپختونخوا کے زیر اہتمام یتیم بچوں میں عید گفٹس کی تقیسم کی تقریب سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر صوبائی صدر الخدمت فاونڈیشن خالد وقاص چمکنی، جنرل سیکرٹری شاکر صدیقی، امیر جماعت اسلامی ضلع پشاور عتیق الرحمن، ضلعی صدر الخدمت فاونڈیشن ارباب عبدالحسیب، صوبائی نائب امیر و سابق ممبرقومی اسمبلی صا برحسین اعوان، سابق صوبائی وزیر حافظ حشمت خان، قاری احمد سعید، افتخار احمد اور دیگر قائدین بھی موجود تھے۔سینٹر سراج الحق نے یتیم بچوں اور بچیوں میں عید گفٹس تقیسم کیے اور ان بچوں میں گھل مل گئے۔ سراج الحق نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ عوام کورونا وائرس کی وجہ سے پریشان تھے اور حکومت چاند کے مسئلے میں الجھے ہوئے تھے اور علماء کرام کا مذاق اڑا رہے تھے۔ انہوں نے کہاکہ وزیراعظم صرف تقریریں کرتے ہیں اور فیصلے کوئی اور کرتے ہیں۔ وہ لاک ڈاون کے خلاف تقریر کرتے ہیں اور اگلے روز لاک ڈاون ہوجاتی ہے اس حکومت کا کوئی سمت معلوم نہیں ہے۔

سراج الحق

مزید :

صفحہ آخر -