کورونا وائرس لاک ڈاﺅن، کاروبار کھولنے کے لیے جسم فروش خواتین نے گاہکوں پر انوکھی ترین پابندی لگانے کی پیشکش کردی

کورونا وائرس لاک ڈاﺅن، کاروبار کھولنے کے لیے جسم فروش خواتین نے گاہکوں پر ...
کورونا وائرس لاک ڈاﺅن، کاروبار کھولنے کے لیے جسم فروش خواتین نے گاہکوں پر انوکھی ترین پابندی لگانے کی پیشکش کردی

  

برن(مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا بھر کی طرح سوئٹزرلینڈ میں لاک ڈاﺅن کے دوران قحبہ خانے بھی بند ہو گئے اور جسم فروش خواتین بے روزگار ہو گئیں۔ تاہم اب سوئٹزرلینڈ میں جسم فروش خواتین نے لاک ڈاﺅن کے خاتمے کے لیے گاہکوں پر ایک انوکھی ترین پابندی لگانے کی پیشکش کر دی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق جسم فروش خواتین کی ایسوسی ایشن کی طرف سے حکومت کو پیشکش کی گئی ہے کہ وہ قحبہ خانے کھولنے کی اجازت دے دے اور جسم فروش خواتین کورونا وائرس کا پھیلاﺅ روکنے کے لیے صرف ایسی پوزیشنز میں اپنے گاہکوں کے ساتھ جنسی تعلق قائم کریں گی جن میں کورونا وائرس پھیلنے کا خطرہ کم سے کم ہوتا ہے۔ ایسوسی ایشن کی طرف سے اپنی آفر میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ہر گاہک کے بعد کمرے کی بیڈ شیٹس تبدیل کی جائیں گی اور 60ڈگری سینٹی گریڈ تک گرم پانی میں دھوئی جائیں گی۔ تولیے وغیرہ بھی ہر گاہک کے بعد دھوئے جائیں گے اور کمروں کو 15منٹ تک کھلا رکھا جائے گا اور ڈس انفیکٹ کیا جائے گا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -