جی سی یو نے تعلیمی کارکردگی جانچنے کیلئے جدید نظام متعارف کرا دیا

جی سی یو نے تعلیمی کارکردگی جانچنے کیلئے جدید نظام متعارف کرا دیا

  

 لاہور(لیڈی رپورٹر)گورنمنٹ کالج یونیورسٹی لاہور نے اپنے تعلیمی شعبوں کی کارکردگی کی پیمائش کے لئے بین الاقوامی معیار کی درجہ بندی کا نظام متعارف کروا دیا۔ تین بہترین شعبہ جات کے اساتذہ کو اعزازیہ بھی دیا جائے گا۔شعبہ جات کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے نظام میں سٹوڈنٹ ایڈوائزر سسٹم کی افادیت، گریٹنگ سسٹم کی ڈیزائننگ، تازہ ترین کورسز، ہینڈ بکس کے معیار، سیمینارز، کانفرنسوں اور تربیتی ورکشاپس کے انعقاد کے بھی سکورز شامل ہیں۔وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر اصغر زیدی نے کہا کہ یونیورسٹی رینگنگ نظام میں ریسرچ سپروائزری کمیٹیوں اور بورڈ آف اسٹڈیز کی باقاعدہ اجلاسوں، اور نئے کورسز اور تعلیمی پرو گر امو ں کے تعارف کو بھی اہمیت دے گی۔ پروفیسر زیدی کا ماننا تھا کہ ایک طویل مشاورتی عمل کے بعد وضع کردہ یہ درجہ بندی کا نظام یونیورسٹی میں تدریسی عمل کو بہتر بنائے گا۔

وائس چانسلر نے کہا اچھی کاردگرگی کا مظاہرہ کرنے والے پہلے تین شعبہ جات کے اساتذہ کو عزازیہ دیا جائے گا جس کے لئے رقم بجٹ میں مختص کی جا رہی ہے۔پروفیسر زیدی نے اساتذہ اور طلباء  کو یقین دلایا کہ وہ جی سی یو میں عالمی معیار کے بہترین طریقوں کو رائج کرنے کے لئے ہر ممکن اقدام اٹھا رہے ہیں۔درجہ بندی کا نظام آئندہ تعلیمی سال سے شروع ہوگا۔اس سے قبل، جی سی یو لاہور 22 سالہ قدیم سٹوڈنٹ گریڈنگ سسٹم کو بھی تبدیل کرنے کا اعلان کر چکا ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -