چارسدہ میں تاجر تنظیموں کا ٹی ایم اے افسران کیخلاف احتجاج

چارسدہ میں تاجر تنظیموں کا ٹی ایم اے افسران کیخلاف احتجاج

  

چارسدہ(بیوررپورٹ)ٹی ایم اے افسران کی جانب سے احتیارات کے ناجائز استعمال اور عوامی املاک کو نقصان پہنچانے پر تاجر تنظیموں نے مقدمہ کے اندراج کے لئے پولیس کو درخواست جمع کر ادی۔ تاجر تنظمیوں نے ٹی ایم اے کے خلاف تنگی روڈ پر احتجاجی مظاہرہ ریکارڈ کرکے ٹریفک کو تین گھنٹوں کے لئے بند رکھا۔ٹی ایم اے کے بعض افسران ریاستی اداروں کے درمیان احتیارات کی جنگ کی زد میں غریب عوام کے املاک کو نقصان پہنچا رہی ہے جس کو کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا۔ تفصیلات کے مطابق چارسدہ کے تاجر تنظیموں کی جانب سے ٹی ایم اے افسران کے خلاف زبردست احتجاجی مظاہرہ ریکارڈ کیا گیا جب بعد میں پولیس کی مقدمہ کے اندارج کی یقین دہانی پر تاجر وں نے اپنا احتجاج ختم کرا دیا۔ اس حوالے سے تاجر تنظیم کے راہنماء افتخار خان کا کہنا تھا کہ گزشتہ روز ٹی ایم اے انکروچمنٹ آفیسر زوہیب باچا نے تنگی روڈ پر تجاوزات کے خلاف آپریشن شروع کیا اس دوران پولیس سمیت دیگر اہلکار بھی ان کے ہمراہ موجود تھے۔ آپریشن کے دوران بجائے اس کے کہ تجاوزات کو ہٹا دیا جاتا لیکن انکروچمنٹ کے نام پر غریب تاجروں کے موٹر سائیکل کے ٹائروں کو پھاڑ دیا گیا جس سے نہ صرف نہ صرف درجنوں دکانداروں کو مشکلات کا سامنا کر نا پڑا بلکہ انہیں شدید مالی نقصان بھی اٹھانا پڑا رہا ہے۔اس دوران مظاہرین نے تنگی روڈ پر ٹریفک کو تین گھنٹوں کے لئے بند رکھا جسے بعد میں پولیس کی جانب سے مظاہرین کو متعلقہ ٹی ایم اے افسران کے خلاف مقدمات کے اندراج پر تاجروں نے اپنا احتجاج ختم کر دیا۔ دوسری جانب ٹی ایم اے انکروچمنٹ آفیسر زوہیب باچا کے مطابق ٹی ایم اے افسران کی جانب سے آپریشن غیر قانونی تجاوزات ختم کرنے کے لئے عمل میں لایا گیا ہے جبکہ اس سے قبل دکانداروں کو باقاعدگی سے نوٹسز بھی دیئے گئے ہیں جس پر متعلقہ دکانداروں کی جانب سے کسی قسم کا عمل درآمد عمل میں نہیں لایا گیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -