وزیر آباد: کمسن لڑکی بداخلاقی کے بعد جاں بحق،ملزم گرفتار

وزیر آباد: کمسن لڑکی بداخلاقی کے بعد جاں بحق،ملزم گرفتار

  

 وزیر آباد(نا مہ نگار،نمائندہ خصوصی) اوباش نے پندرہ سالہ لڑکی کوبداخلاقی کا نشانہ بنا ڈالا، بچی کی طبیعت بگڑنے پر ہسپتال پہنچاتے ہوئے ملزم پولیس تھانہ صدر کے ہاتھ لگ گیا، بداخلاقی کا نشانہ بننے والی لڑکی جاں بحق۔نواحی گاؤں دھونکل کے رہائشی زمیندار شناور جوندہ کے ڈیرہ پر ملازم محمد فیاض لاڑکانہ کا رہائشی ہے جو بھینسوں کو چارہ ڈالنے کا کام کرتا ہے اسی ڈیرہ پر لاڑکانہ کے رہائشی برکت علی کی چچا زاد بہن (و) بھی مقیم تھی گذشتہ شب ملزم فیاض نے (و) کو بہلا پھسلا کر ڈیرہ کے قریب لے جا کر بداخلاقی کا نشانہ بنا دیا جس کے بعد  اسکی طبیعت بگڑ گئی ملزم نیم بے ہوش لڑکی کو رات کے پچھلے پہر تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال لے جا رہا تھا کہ پولیس تھانہ صدر نے مشکوک سمجھ کر باز پرس کی اور بچی کو ہسپتال منتقل کیا جہاں بچی کی بداخلاقی کی وجہ سے موت کی تصدیق ہو گئی پولیس نے ملزم کو حراست میں لے کر تفتیش کا آغاز کر دیا ہے۔

بچی دم توڑ گئی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -