محمد قاسم خان 5جولائی کو اپنے عہدے سے سبکدوش، جسٹس امیر علی بھٹی کو چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ بنانے کا فیصلہ، ذرائع

محمد قاسم خان 5جولائی کو اپنے عہدے سے سبکدوش، جسٹس امیر علی بھٹی کو چیف جسٹس ...

  

 ملتان، بوریوالا(خصوصی رپورٹر، تحصیل رپورٹر)چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ مسٹر جسٹس محمد قاسم خان اور لاہور ہائی کورٹ کے سینئر ترین جج مسٹر جسٹس محمد امیر بھٹی کل 28 مئی ملتان کو متوقع طور پر ملتان آئیں گے اس موقع پر چیف جسٹس ضلع کچہری میں 28 مئی صبح 10 بجے ضلع کچہری کے مختلف ترقیاتی منصوبوں کا افتتاح اور وکلا سے خطاب کریں گے۔ اس ضمن میں ڈسٹرکٹ بار کی جانب سے تیاریاں شروع کردی گئی ہیں۔چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ مسٹر جسٹس محمد قاسم خان 5 جولائی کو اپنے عہدے سے سبکدوش ہو جائیں گے۔لاہور ہائیکورٹ کے سینئر ترین جج مسٹر جسٹس محمد امیر بھٹی کو چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ بنائے جانے کا امکان ہے۔ ہائیکورٹ کی تاریخ میں پہلی بار چیف جسٹس کی مسلسل تعیناتی جنوبی پنجاب سے ہوگی۔ ذرائع کے مطابق چیف جسٹس آف پاکستان نے جوڈیشل کمیشن کا اجلاس 10 جون کو طلب کرلیا ہے۔،جسٹس امیر علی بھٹی کو لاہور ہائی کورٹ کا چیف جسٹس بنانے کا فیصلہ،جسٹس امیر علی بھٹی سینئر ترین جج ہیں،تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ کے سینئر ترین جج جسٹس امیر علی بھٹی جن کا تعلق "دی سٹی آف ایجوکیشن بورے والا" سے ہے انہیں لاہور ہائی کورٹ کا چیف جسٹس بنانے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے جسٹس امیر علی بھٹی 8 مارچ 1962 کو بورے والا میں پیدا ہوئے جسٹس امیر بھٹی نے ابتدائی تعلیم ایم سی ہائی سکول بورے والا سے حاصل کی اور 1985 میں بہا الدین زکریا یونیورسٹی سے وکلالت کی ڈگری حاصل کی جسٹس امیر بھٹی 1986 میں بطور ایڈووکیٹ ہائی کورٹ انرولمنٹ ہوئے 1999 میں جسٹس امیر بھٹی سیکرٹری ہائیکورٹ بار ملتان منتخب ہوئے جسٹس امیر بھٹی نے 2001 میں سپریم میں وکالت کا آغاز کیا جسٹس امیر بھٹی امریکن بار ایسوسی اور انٹرنیشنل بار ایسوسی ایشن لندن کے عہدے پر بھی فائز رہے انہیں سول فوجداری آئینی،ٹیکس،الیکشن،سیٹلمنٹ اور سروس کے قوانین پر عبور حاصل ہے 12 مئی 2011 کو جسٹس امیر بھٹی نے لاہور ہائیکورٹ کے جج کے طور پر عہدے کا حلف اٹھایا تھا اور وہ آئندہ لاہور ہائی کے چیف جسٹس ہونگے۔

ذرائع

مزید :

صفحہ اول -