وزیراعلیٰ پنجاب کا لیہ کیلئے 13ارب 80کروڑ کے خصوصی ترقیاتی پیکیج، یونیورسٹی کے قیام کا اعلان 

وزیراعلیٰ پنجاب کا لیہ کیلئے 13ارب 80کروڑ کے خصوصی ترقیاتی پیکیج، یونیورسٹی ...

  

 لیہ،چوک اعظم،ڈیرہ غازیخان،فتح پور(نمائندہ پاکستان، سٹی رپورٹر،نامہ نگار) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارنے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں تحریک انصاف کی حکومت نے آج یونیورسل ہیلتھ انشورنس کا آغاز لیہ سے کردیا ہے،اس پروگرام کو  ڈیرہ غازی خان ڈویژن اورساہیوال ڈویژن میں باقاعدہ شروع کیا گیا ہے اوران دونوں ڈویژن کے 7اضلاع میں یونیورسل ہیلتھ انشورنس کے تاریخ ساز پروگرام کا آغاز کیاگیا ہے۔فلاحی ریاست کے ویژن کے مطابق پنجاب کے تمام شہریوں کو علاج معالجے کی مفت سہولت کے لئے یہ پروگرام شروع کیا گیا ہے۔پہلے مرحلے میں ڈیرہ غازی خان اورساہیوال ڈویژن کے 48لاکھ خاندان اور ایک کروڑ 15لاکھ سے زائد افراد یونیورسل ہیلتھ کیئر پروگرام کے تحت مفت علاج معالجے کی سہولت حاصل کرسکیں گے۔ دونوں ڈویژن کے شہری اپنا قومی شناختی کارڈ لے کر مخصوص ہسپتالوں میں جاکر علاج معالجے کی بہتر سہولت سے فائدہ اٹھا سکتے ہیں - اس پروگرام کے تحت ہر خاندان سالانہ سوا 7لاکھ روپے تک مفت علاج کی سہولت حاصل کرسکے گا اور اس کے ساتھ مریض کو آمد ورفت کے لئے کرایہ اور 5دن کے لئے ادویات بھی دی جائیں گی اور انشاء اللہ وزیراعظم عمران خان کے ویژن کے مطابق بہت جلد صوبہ پنجاب کا ہر شہری اس سہولت سے فیض یاب ہوگا۔یونیورسل ہیلتھ کیئر پروگرام پنجاب ایسا پراجیکٹ ہے جس کی مثال جنوبی ایشیا تو کیا شایدبیشتر ترقی یافتہ ممالک میں بھی نہ ملے۔جہاں ہر شہری کو مفت علاج معالجے کیلئے ایسی منفرد سہولت حاصل ہو۔ آج اللہ تعالیٰ کے فضل و کرم سے وزیراعظم عمران خان نے لیہ میں مدر اینڈ چائلڈ ہسپتال کا سنگ بنیاد رکھ دیا ہے اور اس ہسپتال سے ماں اور بچے کو علاج معالجے کی بہترین سہولتیں ان کی دہلیز پر میسر ہوں گی- لیہ کا سٹیٹ آف دی آرٹ مدر اینڈ چائلڈ ہسپتال 5ارب73کروڑ 70لاکھ روپے کی لاگت سے تعمیر ہوگا۔وہ آج لیہ میں یونیورسل ہیلتھ کوریج پروگرام اوراربوں روپے کے ترقیاتی منصوبوں کے آغاز کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کررہے تھے۔وزیراعلیٰ نے کہا کہ نیا پنجاب بیسک ہیلتھ یونٹ سولر لائزیشن پروگرام میں لیہ کو شامل کیا گیاہے اور اس کے 36بنیادی مراکز صحت کو شمسی توانائی پر منتقل کیا جارہاہے-وزیراعظم عمران خان نے آج اس کا افتتاح کیاہے۔ لیہ میں آج 69کروڑ 40لاکھ روپے کے 2ترقیاتی منصوبوں کا افتتاح کیاگیا ہے جس میں لیہ شہر کی بیوٹیفکیشن اور روڈ انفراسٹرکچر کامنصوبہ 30کروڑ روپے کی لاگت سے مکمل کیا گیاہے جبکہ نیا پاکستان منزلیں آسان پروگرام کے تحت 28کلو میٹر طویل سڑکوں کی 38کروڑ 20لاکھ روپے کی لاگت سے تعمیر مکمل کی گئی جبکہ ایک ارب 5 کروڑ 30 لاکھ روپے کے 3 ترقیاتی منصوبوں کا سنگ بنیاد رکھا گیا ہے عوام کی ضرورت کو مد نظر رکھتے ہوئے 67 کروڑ کی لاگت سے لیہ چوک اعظم دو رویہ سڑک کا سنگ بنیاد رکھا گیا ہے۔ لیہ کیلئے پنجاب حکومت 10 ترقیاتی منصوبوں کیلئے 59 کروڑ روپے کی منظوری دے چکی ہے۔ ان میں سڑکوں کی تعمیر و توسیع و بحالی کے 9 اور ہیلتھ کے منصوبے شامل ہیں۔لیہ میں شوگر کین سیس پروگرام کے تحت 40کروڑ روپے کی لاگت سے فارم ٹو مارکیٹ سڑکوں کی تعمیرو مرمت کی گئی ہے- انہوں نے کہا کہ یکساں ترقی ہمارا ویژن ہے اوراسی ویژ ن کے تحت ہم لیہ کو بھی بڑے شہروں کے برابر لانا چاہتے ہیں تاکہ عوام کے احساس محرومی کاازالہ کیاجا سکے اور تبدیلی کے اس وعدے کی تکمیل نظر آئے جو ہم نے عوام سے کیا تھا-وزیراعلیٰ نے کہا کہ لیہ کیلئے خصوصی طورپر 13ارب80کروڑ روپے کا ڈسٹرکٹ پیکیج تیار کیاگیاہے جس میں 5 ارب 73 کروڑ کی لاگت سے مدر اینڈ چائلڈ ہسپتال بھی شامل ہے۔ اس پیکیج کے تحت 63  ترقیاتی منصوبے مکمل کئے جائیں گے ان میں ڈسٹرکٹ ڈویلپمنٹ پیکیج کے تحت ہائر ایجوکیشن کے 8،سکول ایجوکیشن کے بھی 8،،نکاسی و فراہمی آب کے 6،ہیلتھ کے 5،ریسکیو1122 سروسز کے4،بیوٹی فکیشن اور میونسپل سروسز کے 2،روڈ سیکٹر کے12، سپورٹس اور ٹورازم سیکٹر کے 2پراجیکٹ مکمل کئے جائیں گے جبکہ ضلع لیہ میں اس وقت 21 ارب روپے کے910 ترقیاتی منصوبے زیر تکمیل ہیں -انہوں نے کہا کہ لیہ میں یونیورسٹی کا قیام علاقے کے عوام کادیرینہ مطالبہ تھا۔ میں آج بہاؤالدین زکریا یونیورسٹی بہادر کیمپس کو یونیورسٹی بنانے کا باقاعدہ اعلان کرتا ہوں اور آپ کو مبارکباد پیش کرتاہوں - یونیورسٹی آف لیہ کا اپنا ایکٹ ہوگا جس کی جلد تکمیل کیلئے ہائیر ایجوکیشن کو ہدایات دی جا چکی ہیں اور اس کے لئے300 ملین روپے گرانٹ دی جائے گی-میں علاقے کے طلبا و طالبات کوان کی دہلیز پر تعلیم کے مواقع فراہم کرنے کے لئے 6گرلز کالج اور امیر الدین والا میں بوائز ڈگری کالج کا اعلان کرتا ہوں،ان منصوبوں پر75 کروڑ روپے خرچ ہوں گے۔تعلیم کا فروغ تحریک انصاف کی حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔ لیہ کے 367سکولوں کواپ گریڈ کیا جا رہا ہے۔ لیہ کے مختلف دیہات او رقصبوں میں فراہمی اور نکاسی آب سمیت 6ترقیاتی منصوبے 77کروڑ روپے کی لاگت سے مکمل کئے جائیں گے-39کروڑ روپے کی لاگت سے ہیلتھ کے 5منصوبے مکمل کئے جائیں گے،عوام کی اشد ضرورت کے پیش نظرچوک اعظم ٹی ایچ کیو میں ٹراما سنٹربنایا جائے گااور ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال لیہ میں ڈینٹل وارڈ،ٹی ایچ کیوکہروڑ میں چلڈرن وارڈز بھی بنائیں گے،اس کے علاوہ واڑہ سہراں اور بھاگل کے بی ایچ یوز اپ گریڈ کئے جائیں گے-چوک اعظم، فتح پور، کوٹ سلطان، 82 موڑ اور دھوری اڈا میں 9 کروڑ 90 لاکھ روپے کی لاگت سے 5 ریسکیو1122 سینٹرز کے قیام کا بھی اعلان کرتا ہوں۔20کروڑ روپے کی لاگت سے لیہ شہرکی بیوٹیفکیشن،سٹریٹ لائٹس اورسڑکوں کی کارپیٹنگ وغیرہ کے منصوبے مکمل کئے جائیں گے۔2کروڑ 65لاکھ روپے کی لاگت سے لیہ شہر، کہروڑ لعل عیسن، جمن شاہ اور چوبارہ میں انصاف سپورٹس فیلڈ بنائے جائیں گے۔سیاحت کے فروغ کیلئے لیہ جیپ ریلی کو سپورٹس کیلنڈر ایونٹ قرار دیا،جائے گااور اس سفاری کے لئے 3کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں - 200کلو میٹر طویل سڑکوں کی تعمیر و مرمت اور توسیع کے 12منصوبے2ارب 72کروڑ 17لاکھ روپے میں مکمل کیے جائیں گے جن میں 75کروڑ روپے کی لاگت سے لیہ تا کہروڑ 30کلو میٹر سڑک بھی شامل ہے-میانوالی مظفر گڑھ روڈ کی تعمیر و مرمت عوام کا دیرینہ مطالبہ اورضرورت ہے۔میری وزیراعظم عمران خان سے درخواست ہے کہ این ایچ اے کو ہدایت کی جائے کہ وہ اس سڑک کو دو رویہ کرنے کے کام کا جلد آغاز کرے۔29ارب روپے کی لاگت سے لیہ،شورکوٹ، چیچہ وطنی 204کلو میٹر طویل روڈ ایشیئن ڈویلپمنٹ بینک کے تعاون سے بنائی جائے گی جس پر کام کا آغاز اگلے مالی سال میں کر دیا جائے گا۔ اس دو رویہ سڑک کی تکمیل سے موٹروے ٹو انڈس ہائی وے رسائی بہتر ہو جائے گی- گریٹر تھل کینال کا منصوبہ جو 13سال سے زیر التواء تھا اس منصوبے کو پی ٹی آئی حکومت نے دوبارہ شروع کیا ہے- لینڈ ایکوزیشن کی مد میں ایک ارب 5 کروڑ روپے کلکٹر کے اکاؤنٹ میں منتقل کردیئے گئے ہیں - صوبہ پنجا ب کے 5 اضلاع خوشاب، لیہ، بھکر، جھنگ اور مظفرگڑھ کی 17 لاکھ 34 ہزار ایکڑ زمینیں سیراب ہوں گی۔ ضلع لیہ میں چوبارہ برانچ سے 72 کلومیٹر طویل نہری نظام سے 2 لاکھ 94 ہزار ایکڑ اراضی سیراب ہوگی۔کاشتکاروں کی سہولت کے لئے لیہ میں 23 قانونگوئی لیول پراراضی سنٹرز کا قیام عمل میں لایا جا رہا ہے۔نیا پاکستان ہاؤسنگ سکیم وزیراعظم عمران خان کا تاریخی منصوبہ ہے- لیہ میں نیا پاکستان ہاؤسنگ سکیم کیلئے 20ایکڑ اراضی مختص کر دی گئی ہے جس پرقرعہ اندازی کا عمل مکمل ہو چکا ہے۔(ZHENFA)ذینفاکے تعاون سے چوبارہ میں 100 میگا واٹ کے سولر پاور پراجیکٹ کا آغاز ہونے جا رہا ہے جس سے 188 ملین یونٹ سالانہ بجلی نیشنل گرڈ میں شامل ہو گی اور اس کا نرخ3.7 سنٹ فی ڈالر ہو گا جو سولر سیکٹر میں اب تک سب سے کم ترین نرخ ہے - اس پراجیکٹ پر باقاعدہ کام کا آغاز ہو چکا ہے اور دسمبر تک اسے مکمل کر لیا جائے گااور اس پراجیکٹ سے حاصل کردہ بجلی عوام کو کم نرخ پر فراہم کی جا سکے گی- جنوبی پنجاب کی سب سے بڑی انڈسٹریل اسٹیٹ لیہ کی تحصیل چوبارہ میں قائم ہو گی اور علاقے میں صنعتیں آنے سے خوشحالی کا دور دورہ ہوگا۔ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کا قیام ایک انقلابی اقدام ہے - یہاں نہ صرف پہلے سے موجود محکموں کی تعداد کو بڑھایا جا رہا ہے بلکہ ملتان میں نئے جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کی عمارت کا سنگ بنیاد رکھ دیا گیا ہے اور بہاولپور میں بھی نئے جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کا سنگ بنیاد جلد رکھا جا ئے گا- ہم نے جنوبی پنجاب کے لئے پہلی مرتبہ 33 فیصد بجٹ مختص کر کے رنگ فینسنگ کر دی ہے - اب یہ بجٹ جنوبی پنجاب سے کسی اور علاقے میں مختص نہیں کیا جا سکے گا- وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں جنوبی پنجاب پائیدار ترقی کی راہ پر گامزن ہوچکاہے اور ہم اس سفر کی منزل کو حاصل کر کے دم لیں گے-

لیہ‘ فتح پور(نمائندہ پاکستان‘سٹی رپورٹر)وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے سیاسی ابلاغ شہباز گل نے کہا ہے کہ موجودہ حکومت جنوبی پنجاب کی ترقی کے لئے فنڈز کی فراہمی کے ساتھ عملی اقدامات کر رہی ہے،پنجاب کے عوام کے لئیانصاف صحت کارڈ کا اجراکیا جارہا ہے، صحت کارڈ بلاتفریق جاری کئے جائیں گے،ماضی کی حکومتوں نے اس علاقے کو نظر انداز کیا اور عوام کو خالی خواب دکھائے، ہمارا لیڈرذہین، محنتی اور ملک وقوم کا  وفادار ہے اور اس کے اندر غریبوں کا دکھ ہے جنہوں نے معاشرے کے غریب لوگوں کے لئے پناہ گاہیں اور لنگر خانے بنائے۔ شہباز شریف  پنجاب سپیڈ نہیں کرپشن سپیڈ ثابت ہوئے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کو یہاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ ماضی میں لیہ اور جنوبی پنجاب کو ہمیشہ پنجاب کی سیاست میں بیچا گیا، یہاں پر خواب دکھائیاور بیچے گئے، اپوزیشن راہنما جنوبی پنجاب سے محض ہمدردی کا اظہار کرتے رہے مگر اپنے دور حکومت میں عوام کے لئے عملی طور پر کچھ نہیں کیا۔اس علاقے کے لئے35 فیصد بجٹ مختص ہوتا تھا اور جب خرچ کیا جاتا تھا تووہ 15فیصدسے17فیصد کے درمیان ختم ہو جاتا تھا۔پچھلے ادوار کے آخری  سال میں جنوبی پنجاب کا 265ارب روپیہ جو یہاں کا حق تھا،  وہ یہاں سے دوسری جگہ منتقل کیا گیا تاکہ منی لانڈرنگ کی جاسکے۔انہوں نے اعدادو شمار پیش کرتے ہوئے کہا کہ پیپلزپارٹی  کے 5سالہ دور میں سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے لیہ کو 1.6ارب روپے کے منصوبے دیئے، بعدازاں سابق وزیراعلی پنجاب  جو خود کو پنجاب سپیڈ کا نام دیتے تھے لیکن انہوں نے ترقی کی بجائے   کرپشن کی   سپیڈ  تیز کی۔  شہباز شریف بڑی باتیں کرتے تھے کہ  انہوں نے یہ کیا اور وہ کیا۔انہوں نے اپنے آخری 5 سال میں لیہ کے لئے 1.7 ارب روپے دیئے   اور  کہا کہ ہم نے بڑا کام کیا اوراب  یہ کہا  جا رہا ہے کہ موجودہ حکومت کچھ نہیں کررہی۔درحقیقت سابقہ حکومتوں نے جنوبی پنجاب کو ترقی کے صرف خواب دکھائے۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کے  دور میں عملی اقدامات ہوں گے۔اللہ کا شکر ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے لیہ کے لئے دو بڑے منصوبوں کا اعلان کیا ہے۔یہ ملکی تاریخ کے بڑے منصوبوں  میں شامل ہیں۔انہوں نے کہا کہ  اب یہاں کے  عوام کے لئے ہیلتھ کارڈ کا اجراکیا جارہا ہے جو بلاتفریق جاری کئے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ پورے ڈی جی خان ڈویژن کو بدھ سے ہیلتھ کارڈ کا  اجرا  شروع  کر دیا گیا ہے۔ پنجاب بھر میں   شہریوں  کو ہیلتھ کارڈ   لیں گے۔انہوں نے کہا کہ ماضی کی حکومتوں کی جانب سے علاقہ کے لئے فنڈز کے اعلان  ہوئے لیکن اس کے باوجود کوئی ترقیاتی کام نہیں ہوئے۔انہوں نے کہا کہ جس طرح انٹرنیٹ نے ترقی کی اسی طرح ہیلتھ کارڈ بھی پورے ملک کی تقدیر بدل دے گا۔یہ گلہ  ہے کہ سرکاری ہسپتالوں میں پورا علاج نہیں ہوتا، دوائیاں  باہر سے خریدنی پڑتی ہیں۔اب ہیلتھ کارڈ اس تصور کو بدل دے گا اور ہرشہری کا بہترین علاج اپنے ہی علاقے کے ہسپتالوں میں ہوگا۔انہوں نے کہا کہ جہاں عوام کا علاج ہوگاوہاں اپوزیشن کے لوگوں کا بھی یہیں  پر علاج ہوگا۔انہوں نے کہا کہ یہ کہنا  کہ نواز شریف بیرون ملک محفوظ نہیں،  مضحکہ  خیز ہے۔  یہ لوگ عوام سے جھوٹ بولنا بند کردیں۔انہوں نے کہ کہ اللہ کا شکر ہے کہ موجودہ حکومت کے دور میں ملک کی معیشت بہتر ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ 70 سال سے بگڑا ہوا نظام ایک دم ٹھیک نہیں ہوسکتا لیکن ہم بہتری کے لئے کوششیں کررہے ہیں۔ ہمارا لیڈرذہین، محنتی اور ملک و  قوم سے وفادار ہے اور اس کے اندر غریبوں کا دکھ ہے۔جس نے معاشرے کے غریب لوگوں کے لئے پناہ گاہیں، لنگر خانے بنائے، جنہوں نے خود تین دفعہ  اس علاقے کا دورہ کیا، ماضی میں اس کی مثال نہیں ملتی، انہوں نے کہا کہ سچ روز روشن کی طرح عیاں ہے۔انہوں نے کہا کہ موجودہ دور میں معیشت بہتر ہوئی ہے،ہماری برآمدات میں اضافہ ہوا ہے اورتعمیرات کا شعبہ ترقی کررہا ہے۔انہوں نے کہا کہ قائد اعظم محمد علی جناح کے بعد ملک کو عمران خان  کی شکل میں   بڑا سیاستدان ملا ہے۔انہوں نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات میں بھی اپوزیشن کو منہ کی کھانی پڑے گی۔ انہوں نے  سوال کیا  کہ کس سیاستدان نے اپنے لئے ذاتی مہنگے فلیٹ بنائے اور کس سیاستدان نے غریبوں  کو چھت مہیا کی اور ان کے لئے سستے مکانات بنائے، یہ عوام کے سامنے واضح ہے۔ انہوں نے لیہ کے عوام سے گزارش کی کہ وہ اپنے لیڈر پر  بھروسہ رکھیں،مشکل حالات کے باوجود وزیراعظم عمران خان عوام کے ساتھ کھڑے ہیں۔انہوں نے لیہ کی صحافی برادری کو یقین دلایا کہ ان کے مسائل حل کئے جائیں گے  اور یہاں کے پریس کلب کو سہولتیں فراہم کرنے کے لئے وزارت اطلاعات سے بات کی جائے گی۔ لیہ کے صحافیوں کا وفد لاہور اور اسلام آباد بھی بھیجا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ ہم سب ایک ہیں۔لیہ اور دیگر شہروں کے لئے ہیلتھ کارڈکے علاوہ سڑکوں کی تعمیر اور تعلیمی منصوبوں  بھی پر بھی کام ہو رہا ہے جبکہ ماضی کے حکمرانوں نے اپنے ترقیاتی منصوبوں کا اعلان کرکے لوٹ کھسوٹ کی۔انہوں نے کہا کہ  ہم نے جاری منصوبوں کو نہیں روکا کیونکہ پراجیکٹ پر لگنے والا پیسہ عوام کا  ہوتا ہے جسے جاری رکھا جانا چاہئے۔عوام پر کوئی احسان نہیں کیا جارہا موجودہ حکومت  ان کی فلاح بہبود کے لئے ترقیاتی منصوبے مکمل کررہی ہے.   

شہباز گل

مزید :

صفحہ اول -