چار ہزار خواتین کے ساتھ جنسی تعلق قائم کرنے کا دعویٰ کرنے والے فحش فلموں کے اداکار نے انڈسٹری کے اندرونی راز دنیا کو بتادئیے

چار ہزار خواتین کے ساتھ جنسی تعلق قائم کرنے کا دعویٰ کرنے والے فحش فلموں کے ...
چار ہزار خواتین کے ساتھ جنسی تعلق قائم کرنے کا دعویٰ کرنے والے فحش فلموں کے اداکار نے انڈسٹری کے اندرونی راز دنیا کو بتادئیے
سورس:   Instagram/mileslong4real

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) چار ہزار خواتین کے ساتھ جنسی تعلق قائم کرنے کا دعویٰ کرنے والے فحش فلموں کے اداکار مائیلز لانگ نے اب فحش فلم انڈسٹری کے اندرونی راز دنیا کو بتا دیئے۔ ڈیلی سٹار کے مطابق 52سالہ مائیلز لانگ گزشتہ 20سال سے فحش فلم انڈسٹری سے وابستہ ہیں اور اب تک سینکڑوں فحش ویڈیوز میں کام کر چکے ہیں۔ انہوں نے اپنے انسٹاگرام اکاﺅنٹ پر، جہاں انہیں 1لاکھ 87ہزار لوگوں نے فالو کر رکھا ہے، ایک پوسٹ میں بتایا ہے کہ فحش فلم انڈسٹری حقیقت میں اتنی پرکشش نہیں ہے ، جتنی باہر سے نظر آتی ہے۔ اس انڈسٹری میں بھی لوگوں کو بہت جدوجہد کرنی پڑتی ہے اور اپنی جنسی صحت کو بھی داﺅ پر لگانا پڑتا ہے۔

مائیلز لانگ کا کہنا تھا کہ ”جب آپ کے اردگر ددرجن بھر لوگ کھڑے آپ کو دیکھ رہے ہوں، ایسے میں آپ کے لیے ایسے مناظر عکسبند کراناانتہائی مشکل ہوتا ہے، بالخصوص مردوں کو ایسی صورت میں انجکشن لگوانے پڑتے ہیں، جس سے ان کی جنسی صحت متاثر ہوتی ہے۔ فحش فلم انڈسٹری کے متعلق ایک سوچ پائی جاتی ہے کہ فحش فلموں کے اداکاروں اور اداکاراﺅں کو بہت زیادہ معاوضہ ملتا ہے۔ حقیقت میں ایسا کچھ نہیں ہے۔ ا ب جا کر فحش فلم انڈسٹری سے وابستہ لوگوں کے معاوضے قدرے بہتر ہوئے ہیں۔ چند سال پہلے تک اس انڈسٹری سے وابستہ لوگ بمشکل گزر اوقات کرتے تھے۔ چند چہرے جو بہت زیادہ معروف ہوتے، انہی کو زیادہ معاوضہ ملتا تھا۔“مائیلز لانگ کا کہنا تھا کہ ”اس انڈسٹری سے وابستہ مردوخواتین کو ایک سب سے بڑا جو مسئلہ درپیش ہوتا ہے، وہ پارٹنر کا ہوتا ہے۔انڈسٹری سے وابستہ لوگوں کو باہر کے لوگ پسند نہیں کرتے اور ان کے ساتھ تعلق قائم نہیں کرتے، چنانچہ انڈسٹری کے لوگوں کو زیادہ تر اپنے پارٹنر کا انتخاب بھی انڈسٹری ہی سے کرنا پڑتا ہے۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -