'اسرائیل سے تعلقات جرم، خلاف ورزی پر سزائے موت، بڑے اسلامی ملک میں قانون منظور

'اسرائیل سے تعلقات جرم، خلاف ورزی پر سزائے موت، بڑے اسلامی ملک میں قانون ...
'اسرائیل سے تعلقات جرم، خلاف ورزی پر سزائے موت، بڑے اسلامی ملک میں قانون منظور

  

بغداد(ڈیلی پاکستان آن لائن)عراقی پارلیمنٹ نے اسرائیل کے ساتھ تعلقات معمول پر لانے کو جرم قرار دے دیا ہے، خلاف ورزی کرنے پر سزائے موت یا عمر قید ہوسکتی ہے۔

گزشتہ روز عراق کی پارلیمان میں ایک قانون کی منظوری دی گئی ہے جس کے بعد اسرائیل کے ساتھ تعلقات معمول پر لانا جرم ہوگا۔329 ارکان پارلیمنٹ میں سے 275 نے اس قانون کے حق میں ووٹ دیا، بیان میں کہا گیا کہ یہ قانون عراقی عوام کے جذبات کی ترجمانی کرتا ہے۔پارلیمنٹ سے فیصلہ آنے کے بعد سینکڑوں افراد بغداد کے تحریر سکوائر پہنچے اور جشن مناتے ہوئے اسرائیل کے خلاف نعرے بازی کی

عراق نے کبھی بھی اسرائیل کو علیحدہ ریاست تسلیم نہیں کیا اور دونوں ممالک کے درمیان سفارتی تعلقات نہیں ہیں۔اسرائیلی وزارت خارجہ کے ترجمان لیور حیات نے عراقی پارلیمان کے فیصلے کی مذمت کی۔انہوں نے کہا کہ اسرائیل اور عرب ریاستوں کے درمیان تعلقات معمول پر آنے سے خطے کے لوگوں کو استحکام اور خوشحالی ملے گی لیکن جو رہنما نفرت اور اشتعال انگیزی کا راستہ اختیار کریں گے اس کا نقصان ان کے اپنے لوگوں کو ہوگا۔

مزید :

عرب دنیا -