کشمیری طلبا نے بالی ووڈ کا یونٹ یونیورسٹی کیمپس سے بھگا دیا

کشمیری طلبا نے بالی ووڈ کا یونٹ یونیورسٹی کیمپس سے بھگا دیا

سرینگر (این این آئی)مقبوضہ کشمیر کے گرمائی دارالحکومت سری نگر میں یونیورسٹی کے غیرت مندطلبہ نے ایک فلم کی شوٹنگ کے خلاف احتجاج کرنے والے طالب علموں سے پولیس کی بدسلوکی پر مظاہرہ کرتے ہوئے تعلیمی سرگرمیوں کا بائیکاٹ کردیا۔کشمیر یونیورسٹی کے غیرت مندطلبہ نے بالی ووڈ کے ایک فلم یونٹ کو کیمپس میں فلمبندی کا عمل بند کرنے پر مجبور کر دیا تھا۔بالی وڈ کے معروف ہدایت کار وشال بھردواج اپنی آنے والی فلم ”حیدر“ کا ایک منظر یونیورسٹی کے احاطے میں عکس بند کرنا چاہتے تھے اور اس سلسلے میں فلمی یونٹ یونیورسٹی پہنچا تھا۔اس منظر میں عسکریت پسندوں کی طرف سے فوج کے ٹھکانے پر خودکش حملہ دکھانے کی کوشش کی گئی۔ اس پر یونیورسٹی کے ہاسٹل میں مقیم طلبہ نے شدید احتجاج کیا اور مشتعل طلبہ کو دیکھ کر فلم یونٹ کو شوٹنگ معطل کر کے کیمپس سے جانا پڑا۔

عادل نامی ایک طالب علم نے غیر ملکی میڈیا کو بتایا کہ ہاسٹل میں مقیم طلبہ کو فلم کی شوٹنگ کا علم تھا، لیکن انہیں یہ نہیں بتایا گیا تھا کہ کون سا منظر فلمایا جائے گا۔

مزید : کلچر