رواں مالی سال کے اختتام کے دوران مجموعی ملکی ایکسپورٹ میں 6 فیصد کمی واقع

رواں مالی سال کے اختتام کے دوران مجموعی ملکی ایکسپورٹ میں 6 فیصد کمی واقع

فیصل آباد (آن لائن) رواں مالی سال کے اختتام کے دوران مجموعی ملکی ایکسپورٹ میں چھ فیصد کمی واقع ہوئی ‘ گزشتہ سال 2015-16 ء کے دوران ملک کی مجموعی ایکسپورٹ چھ ارب 87 کروڑ ڈالر کی تھی جبکہ اس سال 2016-17 ء میں ایکسپورٹ کا حجم چھ فیصد کمی سے چھ ارب 43 کروڑ ڈالر ریکارڈ کیا گیا۔ آن لائن کے مطابق جن مصنوعات کی ایکسپورٹ میں کمی ہوئی ان میں ٹیکسٹائل گروپ میں چار فیصد‘ فوڈ گروپ گیارہ فیصد اور دیگر مینوفیکچرنگ گروپس میں آٹھ فیصد فیصد‘ پیٹرولیم گروپ میں ستائیس فیصد کمی جبکہ متفرق گروپ میں تین فیصد کمی دیکھنے میں آئی ہے اس طرح ٹوٹل ایکسپورٹ گزشتہ سال کے آخری چار ماہ کے دوران مجموعی ایکسپورٹ چھ ارب 87 کروڑ ڈالر کی تھی جبکہ اس سال 2016-17 ء میں ایکسپورٹ کا حجم چھ ارب 43 کروڑ ڈالر چھ فیصد کمی ریکارڈ کی گئی۔ اس سلسلہ میں ایکسپورٹروں نے ملک کے بڑے ایکسپورٹروں نے آن لائن کو بتایا کہ ایکسپورٹ میں کمی کا رجحان گزشتہ چند سال سے جاری ہے اور اس کی بڑی وجہ گیس اور بجلی لوڈ شیڈنگ کے ساتھ ساتھ حکومت کی ناقص پالیسیاں ہیں ۔

جبکہ پاکستان کے مقابلے میں دیگر ہمسایہ ممالک جن میں بنگلہ دیش اوربھارت بھی شامل ہیں ایکسپورٹروں کو بہترین سہولتیں مہیا کررہے ہیں جبکہ پاکستان حکومت اس سلسلہ میں کوئی واضح پالیسی مرتب کرنے میں ناکام رہی ہے۔

مزید : کامرس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...