ایم کیو ایم پر پابندی عائد کی جائے ، الطاف ،فاروق ستار اور مصطفی کمال ایک ہی سکے کے 2 رخ ہیں:ڈاکٹر قادر مگسی

ایم کیو ایم پر پابندی عائد کی جائے ، الطاف ،فاروق ستار اور مصطفی کمال ایک ہی ...
ایم کیو ایم پر پابندی عائد کی جائے ، الطاف ،فاروق ستار اور مصطفی کمال ایک ہی سکے کے 2 رخ ہیں:ڈاکٹر قادر مگسی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) سندھ ترقی پسند پارٹی کے چیئرمین ڈاکٹر قادر مگسی نے مطالبہ کیا ہے کہ ایم کیو ایم کوکالعدم قرار دیکر اس پر پابندی لگائی جائے،الطاف حسین ہوں، ڈاکٹر فاروق ستار یا مصطفی کمال ،تمام لوگ ایک ہی سکہ کے 2 رخ ہیں، الطاف اور زرداری نے طے کر رکھا ہے کہ سندھ کو تقسیم کرنا ہے،الطاف بابائے مہاجر بننا چاہتے ہیں اور زرداری بابائے سندھ ، موجو دہ وزیر اعلی مراد علی شاہ اور سابق وزیر اعلی سید قائم علی شاہ میں بھی  کوئی فرق نہیں ہے۔

مزید پڑھیں:اعلیٰ عدلیہ کے خلاف توہین آمیز مواد نشر کرنے پر پیمرا نے دن نیوز 30 اور نیو ٹی وی کالائسنس 7 یوم کیلئے معطل کردیا

نجی ٹی وی کے مطابق کراچی پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ڈاکٹر قادر مگسی نے کہا کہ سابق صدر جنرل مشرف نے جس گورنر کو لاکر بیٹھایا تھا میں نے اس کے بارے میں اس وقت ہی کہہ دیا تھا کہ یہ اشتہاری مجرم ہے، آج اس ہی کے ساتھیوں نے یہ بات کہی ہے کہ وہ مجر م ہے لیکن اسے 14برس بیٹھاکر باعزت طریقے سے ملک سے باہر جانے دیا گیا جبکہ ہوتا یہ چاہئے تھاکہ اس پر جو الزامات تھے اور جس کی بنیاد پر اسے گورنر کے عہدے سے ہٹایا گیا ان کی بنیاد پر اسے عدالت میں لایا جاتا۔انھوں نے کہا کہ یہ کیسے ہوسکتا ہے کہ الطاف کو تو غدار قرار دیا جائے لیکن اس کے بینر تلے کام کرنے والے لوگوں غدار نہ کہا جائے؟کراچی کے موجودہ میئر وسیم اختر کو الطاف سے کیسے علیحدہ کیا جاسکتا ہے ؟اس لئے حکومت بلدیاتی انتخابات کو کالعدم قرار دے بلدیاتی حکومتوں کو ختم کردے، وسیم اختر اور ان کے ساتھیوں کو چاہئے کہ وہ دوبارہ بلدیاتی انتخابات میں اپنا مینڈیٹ لیکر آئیں۔ انھوں نے کہا کہ ہم نے تو یہ بات شروع سے کہی تھی کہ الطاف حسین ملک توڑنا چاہتا ہے اور یہ ملک دشمن ہے آج یہ بات صحیح ہوگئی، اُن کے گھروں سے اینٹی ائر کرافٹ اور اینٹی ٹینک گنیں برآمد ہور ہی ہیں،یہ لوگ دراصل مہاجر صوبہ نہیں مہاجر دیش بنانا چاہتے تھے۔ انھوں نے کہا کہ پتہ نہیں ایم کیو ایم اور الطاف حسین نے اسٹیبلشمنٹ کو کیا گھول کر پلایا ہے یا ایم کیو ایم والے ڈرامہ کرتے رہے ہیں۔

قادر مگسی نے کہا کہ طالبان اور بلوچستان کے دہشت گردوں کو تو کالعدم قرار دے دیا گیا ہے تو پھر ایم کیو ایم کو کیوں کالعدم قرار نیں دیا جاسکتا؟۔انہوں نے کہا کہ آج سندھ میں پہلے سے زیادہ مہاجر ،مہاجر کی بات ہورہی ہے ،ایم کیو ایم کے گروپ سندھ میں نسلی سیاست کر رہے ہیں،فاروق ستار کے ذریعے سے کراچی میں کیسے امن آسکتا ہے ؟ یہ تو ایم کیو ایم حقیقی سے بھی زیادہ آگے نکل جائیں گے، سابق ناظم مصطفی کمال کے گناہوں اور غلط کاموں کو کیسے معاف کیا جاسکتا ہے ؟ پہلے مصطفی کمال کو عدالت کے کٹہرے میں پیش کیا جائے اور وہ اس بات کا بھی جواب دیں کہ جب بے نظیر بھٹو نے کرا چی میں ریلی نکالی تھی تو اس لائیٹیں کس کے کہنے پر بند کی گئی تھیں؟

مزید : کراچی