شامی علویوں میں سے باسیج فورس کا قیام شروع کیا ،ایران

شامی علویوں میں سے باسیج فورس کا قیام شروع کیا ،ایران

تہران(این این آئی) ایران نے اعتراف کیا ہے کہ شامی علویوں میں سے باسیج فورس کا قیام شروع کیا،ابتدا میں شامی حکومت کی مخالفت کے باوجود اسی نے یہ فورس تشکیل دی تھی اور یہ ملیشیا علیحدگی پسند باغیوں کو کچلنے میں کامیاب رہی۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ایرانی پاسداران انقلاب کے زیر انتظام باسیج فورس کے کمانڈر محمد رضا نقدی نے بتایا کہ باسیج کے ایک سابق کمانڈر حسین ہمدانی نے بشار الاسد کے خلاف انقلابی تحریک شروع ہونے کے پہلے ماہ کے دوران شامی باسیج فورس کے قیام کے حوالے سے نقدی کے ساتھ مشاورت کی تھی۔جس کے بعد شامی علویوں میں سے باسیج فورس کا قیام شروع کیا،نقدی نے ایرانی اخبار سے گفتگو کے دوران شامی باسیج کے قیام میں بشار حکومت کے کسی کردار کا ذکر نہیں کیا بلکہ نقدی کے مطابق شامی حکومت نے ابتدا میں کسی رائے کا اظہار نہیں کیا تھا تاہم بعد میں جب ان ملیشیاؤں نے شامی اپوزیشن کے خلاف کامیابیاں حاصل کیں تو بشار حکومت نے اس کا بھرپور خیر مقدم کرتے ہوئے اس کو وسعت دینے پر آمادگی ظاہر کی۔

نقدی نے بتایا کہ شامی حکومت کے تصور میں بھی نہ تھا کہ شہریوں پر مشتمل ایک ایسی فورس بھی تشکیل دی جا سکتی ہے جو اسلحہ اٹھا کر جنگ میں شریک ہو جائیں۔

مزید : عالمی منظر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...