ہائیر ایجوکیشن کمیشن عامل صحافیوں کو پی ایچ ڈی کی سکالرشپ دے سکتا ہے :پروفیسر مختار احمد

ہائیر ایجوکیشن کمیشن عامل صحافیوں کو پی ایچ ڈی کی سکالرشپ دے سکتا ہے ...

مردان(بیورورپورٹ) ہائیر ایجو کیشن کمیشن عامل صحافیوں کو پی ایچ ڈی کی سکالر شپ دے سکتا ہے اس معاملے پر بات مزید بات چیت ہو سکتی ہے ۔جنوری کے آخر میں پاکستان میں صحافت کے تعلیم کے معیار پر ایک قومی کانفرنس ہائیرو ایجوکیشن کمیشن منعقد کروا ئیگا ان خیالات کا اظہار ایچ ای سی کے چیئر مین نے صحافیوں اور جرنلزم کے پروفیسروں کے درمیان ایک اہم اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا ۔ عامل صحافیوں اور جرنلزم کے پروفیسروں کے درمیاں اس مکالمے کا اہتمام عبدالولی خان یونیورسٹی مردان کے شعبہ صحافت نے کیا تھا ۔ عبدالولی خان یونیورسٹی مردان کے چیئرمین شیراز پراچہ کی قیادرت میں اسلام آباداور پشاور کے سینئر صحافیوں ایڈیٹرز اور صحافت کے اساتذہ ایچ ای سی اسلام آباد کے دفتر میں چیئر مین ایج ای سی پروفیسر ڈاکٹر مختار احمد سے ملے ۔ ایچ ای سی نے اس ملاقات میں شرکت کے لئے اسلام آباد کے مختلف یونیورسٹیوں کے شعبہ صحافت کے سربراہان اور دیگر ماہرین کو مدعو کیا تھا ملاقات کے دوران صحافی اور اساتذہ کے درمیان صحافت کے کورسز اور معیار تعلیم کے باری میں گرما گرم بحث ہوئے اسلام آباد کے یونیوسٹیوں کے اساتذہ نے کہا کہ ان کی یونیورسٹی سے فارغ طالب علم اچھے صحافی ہوتے ہے علامہ اقبال اوپن یونیورسٹی کے ڈین ڈاکٹر سراج ، اسلامک یونیورسٹی کے شعبہ صحافت کے چیئر مین ظفر اقبال، نمل یونیورسٹی کے شعبہ صحافت کے چیئر مین متین حیدر اور دیگر نے پاکستان میں صحافت کے معیار میں کمی کا زمہ دارکو غیر تربیت یافتہ صحافیوں کو قرار دیا۔ جبکہ بی بی سی پاکستان کے ایڈیٹر ہارون الرشید ، چینل 92کے ایڈیٹر مہیش رضہ خان، روزنامہ ڈان کے سینئر اقتصادیرپورٹر مبارک زیب خان،اور دیگر نے اس بات پر زور دیا ۔ کہ پاکستان کے یونیورسٹی میں صحافت کے مضمون میں تبدیلیوں کی ضرورت ہے اور عامل صحافیوں کو بھی صحافت کے کورسز کی تیاری اور پڑھانے میں شامل کرنا ضروری ہے ۔ چیئر مین ایچ ای سی پروفیسر ڈاکٹر مختیار احمد نے عبدالولی خان یونیورسٹی مردان کو سراہتے ہوئے کہا کہ اس یونیورسٹی کی وجہ سے آج ہم سب ایک میز کے گرد بیٹھ کر ایک اہم معاملے پر گفتگو کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ صحافت کا اثر پورے معاشرے پر پڑھتا ہے صحافت کی وجہ سے معاشرے میں مثبت اور منفی تبدیلیا ں آسکتی ہے۔ چیئر مین ایچ ای سی نے کہا کہ ایچ ای سی کورسز کی تیاری کے ہر مرحلے میں صحافیوں اور ماہرین کی رائے اور تجاویز کا خیر مقدم کریگا۔اور جنوری 2017میں ایچ ای سی کے زیر اہتمام صحافت کے موضوع پر ہونے والے قومی مباثے میں تمام معاملات پر تفصیلی گفتگو ہوگی انہوں نے کہا کہ ایچ ای سی کے وسائل پاکستان میں صحافت کی ترقی کے لئے ہر وقت حاضرہے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...