چکوال کی تحصیل چوآ سیدن شاہ سے متعلق وہ باتیں جوشایدآپ کومعلوم نہیں

چکوال کی تحصیل چوآ سیدن شاہ سے متعلق وہ باتیں جوشایدآپ کومعلوم نہیں
چکوال کی تحصیل چوآ سیدن شاہ سے متعلق وہ باتیں جوشایدآپ کومعلوم نہیں

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

چکوال(ڈسٹرکٹ رپورٹر)چوآ سیدن شاہ کو تحصیل کا درجہ1992میں اس وقت دیا گیا جب اس وقت کے گورنر صوبہ سرحد امیر گلستان جنجوعہ نے چوآسیدن شاہ میں ایک بڑے جلسے سے خطاب کیا تھا، پورے پنجاب کی تاریخ میں یہ پہلی تحصیل تھی جو صرف ایک تھانے پر مشتمل تھی اور بلا شبہ اسے پنجاب کے پسماندہ ترین قصبوں میں شمار کیا جاتا تھا ، چوآسیدن شاہ کا ماحول دیہاتی نوعیت کا تھا ، جھنگڑ اور کہون پر مشتمل سنگلاخ پہاڑوں کی اس سرزمین پر عام آدمی کی زندگی بڑی سخت تھی اور پورا چوآسیدن شاہ بنیادی سہولتوں سے محروم تھا۔

پختہ سڑکوں کی تو بات ہی نہیں تھی تنگ پک ڈنڈیوں اور کچے راستوں پر مشتمل چوآسیدن شاہ تھا مگر سیدن کی نگری کی روحانی تجلیات کا نتیجہ ہے کہ یہاں پر سیمنٹ فیکٹریوں کے قیام نے چوآسیدن شاہ اور گرونواح کے علاقوں کو ایک نیا طرز زندگی دیا ، بے شک کچھ لوگوں کے مطابق سالٹ رینج کا ماحول سیمنٹ فیکٹریوں نے خراب کیا ہے اور اس میں شک بھی نہیں مگر یہ بھی بات نمایاں ہے کہ اس وقت جن لوگوں کے پاس سائیکل بھی نہیں تھی وہ آج پجارو پر چڑھے ہوئے ہیں۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

تحصیل چوآسیدن شاہ میں ترقی کا نیا دور شروع ہے او صوبائی وزیر ملک تنویر اسلم سیٹھی نے گذشتہ پانچ سالوں میں چوآسیدن شاہ کو ایک نیا رنگ روپ دیا ہے اور بے شک کل کا پسماندہ چوآسیدن شاہ بڑی تیزی کے ساتھ روشنیوں کا شہر بنتا جا رہا ہے اور بے شک آنے والا تاریخ دان ملک تنویر اسلم سیٹھی کی طرف سے کی جانے والی سنجیدہ کوششوں کو نظر انداز نہیں کر سکے گا ۔ چوآسیدن شاہ بائی پاس ، چوآسیدن شاہ کا نالہ ، گورنمنٹ ڈگری کالج برائے خواتین ، گورنمنٹ بوائز ڈگری کالج چوآسیدن شاہ اور کئی ایسے بڑے منصوبے ہیں جس میں چوآسیدن شاہ کو اب ایک دیہات سے تبدیل کر کے شہر کی شکل دے دی ہے اور اب وہاں پر ریسکیو1122کے دفتر کے قیام سے یقیناً2017ء کے آخر میں ایک نیا چوآسیدن شاہ سامنے آرہا ہے اور تحصیل چوآسیدن شاہ کی تعمیر و ترقی اور خصوصی طور پر تعلیمی ترقی میں ایم این اے راجہ محمد افسر مرحوم اور ان کے صاحبزادہ راجہ مجاہد افسر کی خدمات کوبھی فراموش نہیں کیا جا سکے گا ۔

مزید : چکوال