ایران نے سعودی عرب کے ’دروازے‘ پر اپنی فوجیں مستقل طور پر بٹھانے کا فیصلہ کرلیا، ایسی خبر آگئی کہ جان کر سعودی حکومت کی پریشانی کی حد نہ رہے گی

ایران نے سعودی عرب کے ’دروازے‘ پر اپنی فوجیں مستقل طور پر بٹھانے کا فیصلہ ...
ایران نے سعودی عرب کے ’دروازے‘ پر اپنی فوجیں مستقل طور پر بٹھانے کا فیصلہ کرلیا، ایسی خبر آگئی کہ جان کر سعودی حکومت کی پریشانی کی حد نہ رہے گی

تہران(مانیٹرنگ ڈیسک) یمن میں جاری سعودی اتحاد اور حوثی باغیوں کی لڑائی میں ایران بالواسطہ طور پر شریک تھا اور سعودی عرب کے مطابق باغیوں کی معاونت کر رہا تھا۔ اس معاملے پر دونوں روایتی حریفوں کے تعلقات بہت کشیدہ ہو گئے تھے۔ اب ایران نے ایک ایسا فیصلہ کر لیا ہے کہ جان کر سعودی حکومت کی پریشانی کی انتہاءنہ رہے گی۔

’جب بھی کسی کو بتاﺅں کہ ڈیوٹی ختم ہونے کے بعد یہ کام کرتی ہوں تو وہ شدید حیرت میں مبتلا ہوجاتا ہے‘ ائیرہوسٹس نے اپنی زندگی کے بارے میں ایسا انکشاف کردیا کہ دیکھ کر کسی کو بھی یقین نہ آئے

ایرانی نیوز ایجنسی تسنیم کی ایک رپورٹ کے مطابق ایرانی فوج کے چیف آف سٹاف جنرل محمد حسین بغیری نے شام اور یمن میں نیوی فوج کے اڈے قائم کرنے کی خواہش کا اظہار کیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ”ممکن ہے کسی موڑ پر ہمیں یمن اور شام میں نیوی کے اڈوں کی ضرورت پڑے۔ ان ملکوں میں اڈوں کی اہمیت اتنی ہی ہے جتنی ایٹمی طاقت ہونے کی۔ بلکہ یہ اس سے دس گنا زیادہ اہم ہے۔“

33 کروڑ روپے لے کر جانے والا جہاز گاﺅں میں گرگیا، گاﺅں والے دھڑا دھڑ پیسے جمع کرنے لگے لیکن پھر کیا ہوا۔۔۔؟

عرب نیوز کی رپورٹ کے مطابق ایرانی وزارت دفاع کی طرف سے اپنی ایئرفورس کو بھی جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کرنے کا بیان سامنے آیا ہے۔ تاہم وزارت دفاع نے روس سے سخوئی ایس یو 30جنگی جہاز خریدنے کی خبروں کی تردید کی ہے۔ کئی نیوزایجنسیوں نے ایرانی وزیردفاع حسین دیہغان کا یہ بیان رپورٹ کیا تھا جس میں انہوں نے روس سے یہ جہاز خریدنے کی تصدیق کی تھی اور کہا تھا کہ ”سخوئی جہازوں کی خریداری وزارت کے ایجنڈے میں شامل ہے۔“ تاہم بعدازاں ایرانی وزارت دفاع کی طرف سے اس بیان کی تردید کر دی تھی۔

مزید : عرب دنیا

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...