پیپلزپارٹی نے مطلب نکل جانے کے بعد معاہدے سے انحراف کیا

پیپلزپارٹی نے مطلب نکل جانے کے بعد معاہدے سے انحراف کیا

لاہور( جاوید اقبال) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے چیئرمین راجہ ظفرالحق نے کہا ہے کہ میثاق جمہوریت کا معاہدہ کاغذوں میں تو موجود ہے لیکن عملی طور پر یہ کہیں نظر نہیں آرہا اس کا جواب دونوں فریقین پیپلز پارٹی اور (ن) لیگ دونوں کو دینا ہو گا کہ جمہوریت کے لئے ہونے والے خوبصورت معاہدے کی شکل کس نے بگاڑی ہے ۔وہ ایشو آف دی ڈے میں گفتگو کررہے تھے۔راجہ ظفر الحق نے کہا کہ میثاق جمہوریت ہو یا پھر کوئی اور معاہدہ جو جمہوریت اور جمہوری اداروں کو مضبوط کرنے کا باعث بنا ہو اس کی پاسداری بھی ہونی چاہئے اور اس پر چلنا بھی چاہئے لیکن افسوس کہ پیپلز پارٹی نے اپنے دور میں مفاہمت مفاہمت کھیل کر اپنے پانچ سال تو پورے کر لئے لیکن جب دوسروں کو ضرورت تھی تو وہ بھاگ گئے سیاست اس کو تو نہیں کہتے یہ تو مفاد ہے اور جب مفاد آجاتا ہے تو پھر نقصان ہی نقصان ہے ۔

مزید : صفحہ آخر