فریقین تشدد سے اجتناب کریں ، وزیر اعظم کو جنرل قمر جاوید باجوہ کا فون

فریقین تشدد سے اجتناب کریں ، وزیر اعظم کو جنرل قمر جاوید باجوہ کا فون

راولپنڈی228 لاہور ( مانیٹرنگ ڈیسک 228 ایجنسیاں 228 جنرل رپورٹر ) آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے وزیراعظم کو اسلام آباد دھرنے کو پرامن طریقے سے حل کرنے کی تجویز دے دی ہے۔ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو فون کیا جس میں انہوں نے اسلام آباد دھرنے کو پر امن طریقے سے حل کرنے کی تجویز دی۔ترجمان پاک فوج کے مطابق آرمی چیف نے کہا کہ دونوں اطراف سے تشدد کو روکا جائے، تشدد قومی مفاد اور ہم آہنگی کے لیے ٹھیک نہیں۔ دریں اثنا مسلم لیگ (ن) کے صدر نوازشریف کی زیر صدارت پارٹی کا اہم مشاورتی اجلاس ہوا جس میں نیب کیسز سمیت ملکی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ذرائع کے مطابق جاتی امرا میں ہونے والے اجلاس میں وزیراعظم شاہد خاقان عباسی، شہبازشریف، اسپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق، پرویز رشید، حمزہ شہباز اور رانا ثنااللہ شریک ہوئے۔اجلاس میں ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال سمیت دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا گیا اس موقع پراسلام آباد آپریشن اور اس سے پیدا ہونے والی صورتحال پر بھی غور کیا گیا۔ذرائع نے بتایا کہ اجلاس میں نیب کیسز اور اس پرآئندہ کی حکمت عملی پر بات چیت کی گئی۔فیض آباد دھرنا آپریشن پر سابق وزیراعظم نوازشریف کی زیر صدارت اجلاس میں فیض آباد دھرنے کے خلاف پولیس آپریشن زیر غور رہا،پنجاب حکومت نے حالات سے نمٹنے کیلئے رینجرز کے دستے طلب کرنے کی تجویز دی مذہبی رہنماؤں کو گھروں میں نظربند کرنے کی تجویز بھی زیرغور آئی، اجلاس میں دھرنے سے نمٹنے کیلئے مزید آپریشن پر غور کیا گیا، اجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ پر تشدد مظاہرین کو گرفتار کیا جائے گا اور ان سے قانون کے مطابق سختی سے نمٹا جائے گا۔اجلاس میں وزیراعظم شاہد خاقان عباسی، وزیراعلی پنجاب شہباز شریف، وزیر قانون رانا ثنا اللہ، پرویز رشید اور دیگر رہنماؤں نے شرکت کی۔ اجلاس میں دھرنے سے نمٹنے کیلئے مزید آپریشن پر غور کیا گیا، اجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ پر تشدد مظاہرین کو گرفتار کیا جائے گا اور ان سے قانون کے مطابق سختی سے نمٹا جائے گا۔وزیراعظم شاہدخاقان عباسی نے سابق وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات کر کے سیاسی اور قومی امور پر تبادلہ خیال کیا ۔ملاقات میں سیاسی صورت حال سمیت فیص آباد دھرنے کے خلاف آپریشن پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا ۔

مزید : کراچی صفحہ اول