حلقہ بندیاں، پیپلز پارٹی نے بھی حمایت کی یقین دہانی کرا دی: حکومتی ذرائع

حلقہ بندیاں، پیپلز پارٹی نے بھی حمایت کی یقین دہانی کرا دی: حکومتی ذرائع
حلقہ بندیاں، پیپلز پارٹی نے بھی حمایت کی یقین دہانی کرا دی: حکومتی ذرائع

  

اسلام آباد (صباح نیوز) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سینٹ سے انتخابی حلقہ بندیوں کی آئینی ترمیم کی منظوری کیلئے تمام جماعتوں سے رابطے، ترمیمی بل آج سینٹ میں پیش ہوگا۔ بل کی حمایت میں دوتہائی اکثریت کے حصول کیلئے سینٹ میں قائد ایوان راجہ ظفر الحق اور چیئرمین قائمہ کمیٹی قانون و انصاف سینیٹر جاوید عباسی نے سینٹ کی تمام قابل ذکر جماعتوں سے رابطوں کی تصدیق کی ہے۔ راجہ ظفر الحق نے بتایا کہ ہاﺅس بزنس ایڈوائزی کمیٹی میں بھی تمام جماعتوں سے بات ہوئی تھی بعد میں بھی رابطے ہوئے انہوں نے بھی خدشہ ظاہر کیا کہ اگر اس ترمیم کی منظوری میں رکاوٹ پیدا کی جاتی ہے تو انتخابات میں تاخیر ہو سکتی ہے کیونکہ آئین میں واضح طور پر لکھا ہے کہ مردم شماری کے عبوری نتائج کی پارلیمنٹ سے تصدیق ضروری ہے۔

سینیٹر جاوید عباسی نے بتایا کہ اپوزیشن لیڈر چودھری اعتزاز احسن، تحریک انصاف کے رہنما سینیٹر اعظم سواتی، ایم کیو ایم کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار سے بھی رابطے ہوئے کیونکہ ایم کیو ایم کے سینیٹرز نے ڈاکٹر فاروق ستار سے رابطے کا مشورہ دیا تھا۔ یہ بات درست نہیں ہے کہ ہم نے آئینی ترمیم کی منظوری کیلئے پارلیمانی جماعتوں سے رابطے نہیں کئے۔ حکومتی ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ پیپلز پارٹی سمیت تقریباً تمام جماعتوں نے خاموشی سے بل کی حمایت کی یقین دہانی کرادی ہے اور امید ظاہر کی ہے کہ ارکان کی دستیابی کی صورت میں بل آج یا کل سینٹ میں بھی منظور ہوجائیگا۔

مزید : اسلام آباد