میں نے صرف پاکستان مسلم لیگ(ن) چھوڑی ہے ،اسمبلی سے استعفی کا کوئی فیصلہ نہیں کیا:طاہر اقبال چوہدری

میں نے صرف پاکستان مسلم لیگ(ن) چھوڑی ہے ،اسمبلی سے استعفی کا کوئی فیصلہ نہیں ...
میں نے صرف پاکستان مسلم لیگ(ن) چھوڑی ہے ،اسمبلی سے استعفی کا کوئی فیصلہ نہیں کیا:طاہر اقبال چوہدری

  

اوکاڑہ(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان مسلم لیگ(ن)کو چھوڑنے والے رکن قومی اسمبلی طاہر اقبال چوہدری کا کہنا ہے کہ میں نے صرف پاکستان مسلم لیگ(ن)کو چھوڑا ہے اسمبلی سے استعفی دینے کے حوالے سے ابھی تک کو ئی فیصلہ نہیں کیا۔ 20ایم این ایز نے بل کے حق میں ووٹ نہیں دیا تھا ،ہو سکتاہے کہ میرے ساتھ وہ بھی ن لیگ چھوڑ دیں 

نجی چینل”جیو نیوز“کے پروگرام”کیپٹل ٹاک “میں گفتگو کرتے ہوئے گزشتہ روز پاکستان مسلم لیگ(ن) کو چھوڑنے والے رکن قومی اسمبلی طاہر اقبال چوہدری کا کہنا تھا کہ حکومت نے دھرنا مظاہرین والے معاملے کو مس ہینڈل کیا جو کام آج کیا ہے وہ پہلے بھی کیا جا سکتا تھا ،اگر یہ استعفی پہلے لے لیتے تو اتنانقصان نہیں ہوتا۔

انہوں نے مزید کہا کہ پارٹی میں جمہوریت نامی کو ئی چیز نہیں ،اپنے ساڑھے چار سالہ کئیرئیر میں نواز شریف سے ایک بھی ون ٹو ون ملاقات نہیں ہوئی ،اس پارٹی میں فیصلوں پر کوئی مشاورت نہیں لی جاتی۔طاہر اقبال چوہدری کا کہنا تھا کہ میں نے آزاد حثییت سے الیکشن میں کامیابی حاصل کی تھی آئندہ بھی ایسے ہی الیکشن میں جاﺅں گا۔پاکستان مسلم لیگ کے زعیم قادری کااس حوالے سے کہنا تھا کہ وہ اس سے پہلے بھی دو بار استعفعی دے چکے ہیں بعد میں واپس آجاتے ہیں۔

دوسری جانب نجی ٹی وی دنیا نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے رکن قومی اسمبلی طاہراقبال چوہدری نے کہاہے کہ 20ایم این ایز نے بل کے حق میں ووٹ نہیں دیا تھا ،ہو سکتاہے کہ میرے ساتھ وہ بھی ن لیگ چھوڑ دیں ،مسلم لیگ ن جمہوری پارٹی نہیں ہے ، پارٹی میں ہماری بات نہیں سنی جاتی تھی ،جنوبی پنجاب کے ارکان ن لیگ سے ناراض ہیں ،ساڑھے چار سالوں میں نوازشریف سے ملاقات نہیں ہوئی ۔

مزید : قومی